fbpx

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کا اقتدار چھوڑنے کا اعلان

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کا اقتدار چھوڑنے کا اعلان

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈن نے اقتدار چھوڑنے کا اعلان کر دیا ہے، وہ اگلے ماہ وزارت عظمی کی ذمہ داریاں چھوڑ دیں گی۔ نیوزی لینڈکی وزیراعظم 7فروری تک اپنے فرائض سرانجام دیں گی، اقتدار چھوڑنے کے اعلان کے ساتھ انہوں نے کہا کہ دوبارہ الیکشن لڑنےکا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

سالانہ اجلاس میں جیسنڈا آرڈرن کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کا عہدہ سنبھالنا ایک بڑی ذمہ داری تھی، لیکن اب وہ سمجھتی ہیں کہ ان میں وہ انرجی باقی نہیں رہی کہ وزیراعظم کے منصب کے ساتھ انصاف کرسکیں۔ جیسنڈا آرڈن نے پوچھا گیا کہ نیوزی لینڈ کے لوگ ان کی قیادت کو کس طرح یاد رکھیں گے؟ تو انہوں نے کہا کہ ایک ایسے شخص کے طور پر جس نے ہمیشہ مہربان رہنے کی کوشش کی ہے۔
مزید یہ بھی پڑھیں؛
پاکستان کو درپیش چیلنج سے نکال کر اپنے پاﺅں پر کھڑا کریں گے۔ وزیر اعظم
قیادت کرنے سے ہی آتی ہے کوئی نیچرل یا پیدائشی کپتان نہیں ہوتا. وسیم اکرم
عدالت نے معروف قانون دان لطیف آفریدی کے قتل کے ملزم کا جسمانی ریمانڈ منظور کرلیا
مس ایل سلواڈور کی مقابلہ حسن میں بٹ کوائن والے لباس میں شرکت
حافظ نعیم الرحمٰن الیکشن کمیشن پر الزامات نہ لگائیں،صوبائی الیکشن کمشنر
الیکشن کمیشن نے (ق) لیگ کو معاملہ جلد دیکھنے کی یقین دہانی کرادی
عوام نے نام نہاد مقبول لیڈرز کا پول کھول دیا ہے. بلاول بھٹو زرداری
واضح رہے نیوزی لینڈ میں عام انتخابات رواں سال اکتوبرمیں ہوں گے۔ جیسنڈا آرڈرن کو دنیا کی سب سے کم عمر خاتون حکمران کا اعزاز حاصل ہے، وہ 2017 میں 37 سال کی عمر میں وزیراعظم منتخب ہوئی تھیں۔