لطیف آفریدی قتل کیس: ملزم کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا

0
48
Lateef Afridi

لطیف آفریدی قتل کیس: ملزم کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا

عدالت نے سینئر وکیل لطیف آفریدی کو قتل کرنے والے ملزم عدنان آفریدی کو 14 روز جوڈیشل ریمانڈ پرجیل بھیج دیا۔ پشاورکی عدالت میں سینئر وکیل لطیف آفریدی قتل کیس کی سماعت ہوئی، جہاں ملزم عدنان آفریدی جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا،عدالت نے ملزم کا 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ منظور کرکے جیل بھیج دیا۔

واضح رہے کہ پشاورہائی کورٹ بار روم میں فائرنگ سے سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدرعبدالطیف آفریدی جاں بحق ہوگئے تھے۔ فائرنگ کرنے والے شخص کو موقع پر ہی گرفتارکرلیا گیا، جس کی شناخت ایڈوکیٹ سمیع آفریدی کے نام سے ہوئی تھی۔ جبکہ خیبر پختونخوا بارکونسل نے ہڑتال و سوگ کا اعلان کردیا تھا.
مزید یہ بھی پڑھیں؛
بارشیں برسانے والا نیا سلسلہ 24 جنوری تک جاری رہنے کا امکان
فیفا ورلڈ کپ ٹرافی جیتنے پر خراج تحسین،کسان نے مکئی کے کھیت میں میسی کی تصویر بنا دی
رواں برس ہی روسی افواج کو یوکرینی علاقوں سے نکالنا بہت مشکل ہے،امریکا
بلوچستان مالی بحران:فوری اقدامات نہ کئےتوہم سخت فیصلے کرنے پرمجبور ہوںگے، وزیراعلیٰ بلوچستان
جوکچھ امریکن انٹرنیشنل اسکول میں طالبہ کے ساتھ سلوک ہوا اس کی مذمت کرتےہیں:سٹی سکول
نیا پاکستان اورنیا پاکستان اسلامک سرٹیفکیٹ پرمنافع کی شرح میں اضافہ

یاد رہے کہ فائرنگ کرنے والے شخص کو موقع پر ہی گرفتارکرلیا گیا، جس کی شناخت ایڈوکیٹ سمیع آفریدی کے نام سے ہوئی تھی فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والےعبدالطیف آفریدی کو فوری طوراسپتال منتقل کیا تھا لیکن وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے تھے۔ عبدالطیف آفریدی قتل کے خلاف کے خیبر پختونخوا بارکونسل نے ہڑتال و سوگ کا اعلان کیا گیا تھا، بار کونسل کا کہنا تھا کہ 17 جنوری کو وکلا صوبہ بھرکی عدالتوں میں پیش نہیں ہونگے اور واقعہ پر3 دن پورے صوبے میں سوگ منایا گیا تھا.

خیبر پختونخوا بارکونسل نے سیکیورٹی کوتاہی پراعلیٰ سطح تحقیقات کرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ واقعہ سے وکلا میں تشویش پائی گئی تھی جبکہ مطالبہ کیا گیا تھا وکلا تحفظ ایکٹ کو فوری طورپر نافذ العمل کیا جائے۔

Leave a reply