fbpx

فرض شناسی کی اعلی مثال: خاتون کو بچانے کی کوشش، ملازم نےاپنی جان کی قربانی دے دی

امریکا : ملازم نے خاتون کی جان بچانے کے لیے اپنی جان کی قربانی دے دی۔

باغی ٹی وی : :ڈیلی میل ” کے مطابق 34 سالہ جوکین رومیرو نامی شہری کیلیفورنیا کی پاوما ویلی میں لا جولا انڈین ریزرویشن پر ‘لا جولا زپ زوم زپ لائن’ میں کام کرتا تھا جہاں یہ حادثہ پیش آیا، رپورٹ کے مطابق ملازم حفاظت کے لیے خاتون کو باندھ ہی رہا تھا کہ خاتون زپ لائن پر آگے چلی گئی ، جسے اس نے پکڑنے کی کوشش کی لیکن وہ بھی ساتھ ہی پھسلتا چلا گیا۔

عملے کا کہنا ہے کہ دونوں 100 فٹ کی بلندی پر پھنس چکے تھے، لیکن زپ لائن اتنی مظبوط نہیں تھی، کہ زیادہ دیر تک دونوں کا وزن برداشت کر سکے، اس لیے دونوں کی جان خطرے میں تھی۔

جوکین رومیروکئی سالوں سے وہاں ملازم تھا اور وہ یہ بات اچھے سے جانتا تھا، اس نے خاتون کی جان بچانے کے لیے خود کی قربانی دینے کا فیصلہ کیا اور زپ لائن سے چھلانگ لگا دی ملازم کو ائیر ایمبولنس کے ذریعے اسپتال لے جایا گیا لیکن اسے بچایا نا جا سکا، جبکہ خاتون کو کوئی نقصان نہیں پہنچا۔

زپ لائن کمپنی کا کہنا ہے کہ وہ اپنے ملازم کی موت سے انتہائی دکھ میں ہیں اور واقع کی تحقیقات کے لیے وفاقی اور ریاستی حکام کا ساتھ دینے کی ہر ممکن کوشش کریں گے۔

زپ لائنوں سے ایک سال میں تقریباً 16 لوگ مر جاتے ہیں لا جولا میں منتخب کرنے کے لیے تین مختلف زپ لائنیں ہیں، جن میں سے 300 سے 2,700 فٹ تک ہے اور یہ 55 میل فی گھنٹہ کی رفتار تک پہنچ سکتی ہے لا جولا ٹرائب نے اپنا کیمپ گراؤنڈ 1930 میں کھولا اور اس کی تازہ ترین کشش لا جولا زپ لائن ہے، جو ستمبر 2015 میں کھلی تھی۔