ورلڈ ہیڈر ایڈ

بھارت، مسلم نوجوان کی شہادت میں ملوث 11 انتہاپسند گرفتار، مسلمانوں‌ کا احتجاج جاری

بھارت میں‌ مسلم نوجوان تبریز انصاری کے قتل کیس میں‌ 11 افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے.

باغی ٹی وی کی رپورٹ‌ کے مطابق مسلمانوں اور اپوزیشن جماعتوں‌ کی شدید تنقید کے بعد تبریز انصآری کی موت کی تحقیقات کیلئے ایک خصوصی تحقیقاتی کمیٹی بھی بنا دی گئی ہے جو اس واقعہ کی تحقیقات کرے گی.

سوشل میڈیا پر بھی اس واقعہ کے خلاف سخت تنقید کی جارہی ہے. ضلعی انتظامیہ نے دعویٰ کیا ہے کہ تبریز انصاری کیس کے سلسلہ میں‌ دو پولیس اہلکاروں‌ کو بھی معطل کر دیا گیا ہے. یہ دونوں مقامی پولیس تھانوں کے انچارج تھے.

واضح‌ رہے کہ بھارتی ریاست جھاڑ کھنڈ میں ایک دن قبل ہندوانتہاپسندوں‌ کی جانب سے مسلم نوجوانوں کو جے شری رام کے نعرے لگانے پر مجبور کیا گیا اور پھر اسے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے شہید کر دیا گیا تھا. تبریز کا کوئی مجرمانہ ریکارڈ نہیں تھا لیکن انتہاپسندوں نے اس پر چوری کا الزام لگا کر تشدد کیا اور شہید کر دیا تھا. اس واقعہ کے خلاف مسلمان بھرپور احتجاج جاری رکھے ہوئے ہیں.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.