نوازشریف کی بلڈ شوگر دس روز سے چیک نہیں کی گئی، میڈیکل رپورٹس بھی نہیں دی جارہیں، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ آخری جمعرات کو نوازشریف سے ملاقات میں جیل کے سرکاری ڈاکٹر آئے تو رپورٹ دکھا کر پریشان لگ رہے تھے، نوازشریف کی بلڈ شوگر دس روز سے چیک ہی نہیں کی گئی،

باغی ٹی وی کی رپورٹ‌ کے مطابق مریم نواز نے جاوید ہاشمی، ڈاکٹر عدنان، پرویز رشید اور عظمی بخاری کے ہمراہ ماڈل ٹاؤن میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ تین جولائی کی رپورٹ لکھی جس میں درج تھاکہ نوازشریف کی طبیعت خراب ہے اور فورا ہسپتال منتقل کیاجائے، نوازشریف کا آئینی قانونی حق ہےکہ بلڈ ٹیسٹ سمیت دیگر رپورٹس دکھانی چاہیے تھی، بیٹی کو بھی نہیں بتایا کہ گردوں اور شوگر میں مسئلہ ہے،

مریم نواز نے کہاکہ نوازشریف کو صحت کی رپورٹ پر بہانہ لگایا فوٹو کاپی مشین خراب ہے، جیل آفس انچارج نے نواز شریف صحت پر رپورٹ مجھے نہیں دی گئی، آئی جیل خانہ جات کو خط لکھا ڈاکٹر عدنان نے بھی خط لکھا رپورٹ کی کاپی جاری کی جائےکسی نے جواب نہیں دیا، فیملی کو نہیں پتہ میاں نوازشریف کی طبیعت خراب رہی اور میڈیکل بورڈ نے بھی کیا علاج کیا نہیں بتایاگیا یہ مجرمانہ غفلت ہے،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.