fbpx

اوکاڑہ: تھانہ صدرگوگیرہ کی پولیس کا وحشیانہ تشدد، ملزم جان کی بازی ہار گیا۔ ورثا کا سخت احتجاج

ملزم تصور دس روز قبل پولیس تھانہ لایا گیا جس پر انسانیت سوز تشدد کیا گیا۔ ورثاء کا دعویٰ

اوکاڑہ(علی حسین) اوکاڑہ کے نواحی علاقے صدرگوگیرہ پولیس تھانہ میں ڈکیتی کے مقدمے کی بابت لائے گئے ملزم تصور کو پولیس نے انسانیت سوز تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔ تصور کے ورثاء نے باغی ٹی وی کو بتایا ہے کہ تصور کو دس روز قبل تھانہ گوگیرہ کی پولیس نے پکڑا اور اسے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا جسکی وجہ سے وہ شدید زخمی ہوگیا۔ مضروب کی نازک حالت کی بنا پر اسے لاہور کے ایک ہسپتال میں ریفر کیا گیا جہاں وہ دس روز زیر علاج رہنے کے بعد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔ متوفی کے ورثاء نے اوکاڑہ فیصل آباد روڈ بلاک کرکے احتجاج ریکارڈ کرایا ہے۔ ڈی پی او اوکاڑہ عمرسعید ملک نے واقعہ کا فوری نوٹس لیتے ہوئے تھانہ گوگیرہ کے ایس ایچ او کا فی الفور تبادلہ کردیا ہے۔ باغی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے عمرسعید ملک نے کہا ہے کہ واقعہ کی شفاف تحقیقات کی جائیں گی اور واقعے کے حقیقی محرک کو قرار واقعی سزا دی جائیگی۔