fbpx

پرویزالہٰی ہی پنجاب کی وزارت اعلیٰ کیلئے پارٹی کے امیدوار ہیں،چودھری شجاعت

جن کو مینڈیٹ ملا حکومت کرنا ان کا حق ہے،چودھری شجاعت حسین

چودھری شجاعت حسین نے وزرات اعلیٰ پنجاب کے لیے اپنا ووٹ بھائی پرویز الہیٰ کے پلڑے میں ڈال دیا۔

باغی ٹی وی :پنجاب کی وزارت اعلیٰ کے لیے 22 جولائی کو ہونے والے انتخاب سے قبل چوہدری شجاعت پاکستانی سیاست میں مرکز نگاہ بنے ہوئے ہیں اور چوہدری پرویز الٰہی کے وزیر اعلیٰ بننے یا حمزہ شہباز کے وزیراعلیٰ برقرار رہنے کا دارومدار چوہدری شجاعت کے فیصلے پر ہے۔

تاہم اب پنجاب کی وزارت اعلیٰ کے حوالے سے چوہدری شجاعت نے بھی واضح کر دیا ہے کہ چودھری پرویز الٰہی ہی پنجاب کی وزارت اعلیٰ کیلئے پارٹی کے امیدوار ہیں جن کو مینڈیٹ ملا حکومت کرنا ان کا حق ہے۔ایک بار نہیں دو تین بار پہلے بھی یہی بات کہہ چکا ہوں۔کوئی لیٹر جاری نہیں کر رہا۔کسی قسم کے لیٹرز جاری کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔

چودھری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ مجھے صفائی پیش کرنے کی کوئی ضرورت نہیں۔ ملکی مسائل کا حل اسی میں ہے کہ گنتی کے چکروں سے باہر نکلا جائے۔ غریب آدمی کے مسائل کی طرف توجہ دی جائے۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ جو غریبوں کے مسائل حل کرنے میں کامیاب ہو گا حقیقی معنوں میں اسی کی گنتی پوری ہو جائے گی۔جو منتخب ہوئے ہیں وہ عوام کی خدمت کریں۔ اس فکر میں نا پڑیں کہ ایک دوسرے کو کیسے نیچے دکھانا ہے ملکی مسائل کا حل اسی میں ہے کہ سال ڈیڑھ سال حکومت کا موقع ملنا چاہیے یا پھرفوری انتخابات کی طرف جایا جائے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روزسابق صدر آصف زرداری نے مسلم لیگ ق کے صدر چودھری شجاعت حسین سے ملاقات میں وزارت اعلیٰ کے لیے حمایت اور اتحاد کی درخواست کی ہے۔