وزیر اعظم بن کر بلوچستان کے لاپتا افراد کا مسئلہ حل کروں گا۔بلاول

0
108
bilawal

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول زرداری نے خضدار میں انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج ایک بار پھر بلوچستان کی سرزمین پر کھڑا ہوں،آج خضدار میں بلوچ بھائیوں اور بہنوں کے درمیان کھڑا ہوں

بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ کچھ قوتیں پاکستان پیپلزپارٹی کو نشانہ بنائے ہوئےہیں ،وہ قوتیں نہیں چاہتیں کہ پیپلزپارٹی بلوچستان میں حکومت بنائے،وہ قوتیں نہیں چاہتیں کہ پیپلزپارٹی وفاق میں حکومت بنائے،وزیراعظم، وزیراعلیٰ بلوچستان جیالہ بنتا ہے تو ان کی سازشیں ناکام ہوں گی،وہ جانتے ہیں کہ میری رگوں میں بلوچ کا خون دوڑتا ہے،جس طرح میں بلوچستان کا دکھ درد سمجھتا ہوں یہ احساس کسی اور سیاستدان میں نہیں،وہ جانتے ہیں میں بینظیر کا بیٹا ہوں اور بلوچستان کے شہدا کا دکھ سمجھتا ہوں،وہ جانتے ہیں میں بلوچستان کے عوام کے مسائل جانتا ہوںموہ جانتے ہیں دہشت گردوں کا مقابلہ اور لاپتہ افراد کے مسئلے کا حل بھی نکال سکتا ہوں،بلوچ عوام، وفاق میں دراڑیں ڈالنے کی سازش بھی بلاول ناکام کرے گا،وہ جانتے ہیں ہم نفرت کی سیاست نہیں کرتے، بلاتفریق خدمت کرتے ہیں،تمام قوتوں کا مقابلہ کرنے کو تیار ہیں مگر عوام کے حق پر سودا نہیں کرسکتے،وہ جانتے ہیں پیپلزپارٹی واحد جماعت ہے جو بلوچستان کو حق دلا سکتی ہے،وہ جانتے ہیں پیپلزپارٹی بلوچستان میں غربت، بیروزگاری کا خاتمہ کرسکتی ہے،نفرت، تقسیم، دہشت گردی کی وجہ سے وہ سمجھتے ہیں یہ بچہ ہے ڈر جائے گا.

بلاول زرداری کا مزید کہنا تھا کہ دہشت گرد تنظیموں نے پیپلز پارٹی امیدواروں پر حملے کیے، مستونگ، بولان، تربت میں میرے امیدواروں پر حملے ہوئے،ہمارا کارکن شہید ہوا، کوئٹہ میں پی پی صوبائی صدر پر حملہ ہوا،خضدار میں بھی ہمارے امیدوار پر حملہ ہوا،ان کا خیال تھا پیپلزپارٹی کے جیالے اور ہم حملوں سے خوفزدہ ہوجائیں گے لیکن ہم ڈرنے والے نہیں،اگر صدر زرداری کی اٹھارویں ترمیم، این ایف سی ایوارڈ اور آغاز حقوق بلوچستان پر عمل ہوتا تو آج پکنے والی تمام سازشیں ختم ہو جاتیں،ہم عوام کی طاقت سے تمام قوتوں کا مقابلہ کرنے کے لئے تیار ہیں لیکن عوام کے حق پر سودا نہیں کریں گے۔ بندوق کے زور پر تمام مسئلے حل نہیں کر سکتے تمام مسائل کا حل خود نکال لوں گا،آپ اپنی سیاست کریں ،پر امن طریقے سے تحریکیں چلائیں ،وزیر اعظم بن کر بلوچستان کے لاپتا افراد کا مسئلہ حل کروں گا۔دہشت گردی کا سر اٹھ رہا ہے ،میں خود دہشت گردوں کا سر کاٹوں گا،ان کی حرکتوں کی وجہ سے سب کچھ مہنگا ہوچکا صرف عوام کا خون سستا ہے ،وزیر اعظم بنا تو بلوچستان کے عوام کو معلوم ہوگاکہ ان کا نمائندہ وزیر اعظم ہاؤس میں بیٹھا ہے ،8 فروری کو بلوچستان میں تیروں کی بارش ہو گی ،اگر میں لاہور سے الیکشن لڑ رہا ہوں تو آپ کا نمائندہ بن کر الیکشن لڑ رہا ہوں ،ہمارا سر کٹ تو سکتا ہے لیکن کسی دہشت گرد کے سامنے جھک نہیں سکتا ،

عمران خان کیخلاف بات کرنے پر پی ٹی آئی رہنما نے امام مسجد کو منافق کہہ دیا

میں وعدے کر کے یوٹرن نہیں لیتا تھا، نواز شریف

خیبر پختونخوا والو، آپ بھی جھوٹے شخص کے جھانسے میں آگئے؟ نواز شریف کا سوال

مریم نواز کے جلسے میں پارٹی پرچم پھاڑنے والے طالب علموں پر مقدمہ درج

 نواز شریف کے مخالف عبرت ناک انجام کو پہنچ رہے ہیں

پاکستان کو نواز دو کے سلوگن سے مسلم لیگ ن نے انتخابی منشور جاری 

ہم ووٹ مانگنے جاتے تو لوگ خواجہ سرا سمجھ کر 50 کا نوٹ دیتے، نایاب علی

 پرانے سیاستدان عوامی خدمت کے بجائے ذات کیلئے سیاست کررہے ہیں

Leave a reply