fbpx

پروفیسرکا قاتل کیسے گرفتار ہوا؟

ایس ایس پی آپریشن یاسرآفریدی نے بتایا کہ ڈی ایس پی حیات آباد کی سربراہی میں ایس ایچ او پرمشتمل ٹیم نے پروفیسرکے اندھے قتل کیس میں اہم پیش رفت کی گئی ہے، پروفیسرمحمد اقبال کے قتل میں ملوث ملزم کا سراغ لگا لیا گیا ہے، ملزم کی شناخت جدید سائنسی طریقے سے ممکن ہوئی ہے، شناخت کے بعد ملزم کی لوکیشن حاصل کی گئی ہے، ملزم واردات کے بعد سوات کے راستے فرار ہونے کی کوشش کررہا تھا، لوکیشن حاصل کرنے کے بعد سوات پولیس سے رابطہ کر لیا گیا ہے، سوات پولیس کی مدد سے ملزم کو مینگورہ کے علاقے محلہ پرکاش سے گرفتار کر لیا گیا ہے، ملزم نجیب اللہ کا تعلق ضلع خیبرسے ہے، ملزم کو کل پشاور منتقل کیا جائے گا، ملزم نے ابتدائی تفتیش کے دوران پروفیسر محمد اقبال کے قتل میں ملوث ہونے کا اعتراف کر لیا ہے، پشاور منتقلی کے بعد قتل کے اصل محرکات معلوم ہو سکیں گے.