fbpx

پنجاب کے ضمنی انتخابات میں فوج کی تعیناتی ضروری ہے،چیف الیکشن کمشنر

لاہور: چیف الیکشن کمشنرسکندر سلطان راجا کا کہنا ہے کہ ووٹرز کی حفاظت کے لئے پنجاب کے ضمنی انتخابات میں فوج کی تعیناتی ضروری ہے۔

باغی ٹی وی : انہوں نے سیکریٹری الیکشن کمیشن کو سیکورٹی اورانتظامات کا جائزہ لینے کے لئے لاہور کیمپ آفس قائم کرنے کی ہدایت کی دوسری جانب سیکریٹری الیکشن کمیشن عمر حمید خان لاہور پہنچ گئے ضمنی انتخابات کے لئے سیکورٹی اورالیکشن انتظامات کا جائزہ لینے کے لئے صوبائی الیکشن کمشنر کے دفترمیں کیمپ آفس قائم کردیا گیا ہے۔

وزارت داخلہ نےالیکشن کمیشن کی درخواست پرضمنی انتخابات کےموقع پر 2000 ایف سی اہلکار تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے سیکریٹری الیکشن کمیشن عمر حمید خان کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ امن و امان کی ممکنہ صورت حال کے باعث کیا گیا۔ الیکشن کے دوران کسی قسم کی بدامنی برداشت نہیں کی جائے گی اورتخریبی عناصر کے خلاف بلا امتیاز سخت کارروائی کی جائے گی تمام ریاستی اداروں کی بھرپور مدد حاصل ہے۔ بہتر انتظامات اور مکمل سیکیورٹی کی یقین دہانی کرائی گئی ہے۔ عوام بلا خوف و خطر گھر سے باہر نکلیں اور ووٹ ڈالیں-

قبل ازیں الیکشن کمشنر پنجاب سعید گل نے کہا تھا کہ ہم نے قانون و آئین کے تحت کام کرنا ہے اور ہم مکمل طور پر غیرجانبداری سے کام کر رہے ہیں پولیس تعینات ہے اور رینجرز کیو آر ایف کی صورت میں موجود ہو گی جب کہ تمام نتائج کے لیے لاہور کے کیمپ آفس میں بڑی اسکرین لگائی گئی ہے اور تمام آر اوز کے پاس پریزا ئیڈ نگ افسران واٹس ایپ پر فارم 45 بھیجیں گے۔

الیکشن کمشنر پنجاب نے کہا تھا کہ ہم نے قانون و آئین کے تحت کام کرنا ہے اور ہم مکمل طور پر غیر جانبداری سے کام کر رہے ہیں۔ الیکشن کمیشن پر جو الزامات لگائے جارہے ہیں اس میں کوئی حقیقت نہیں ہے، تمام آر اوز کے کیمپ آفس سے پریزائیڈنگ افسران سامان لے کر جائیں گے اور تمام پولنگ اسٹیشنز پر سامان لے جانے کے لیے سیکیورٹی کی الگ الگ گاڑیاں ہیں۔

انہوں نے کہا تھا کہ پنجاب پلین ایریا ہے پولنگ اسٹیشنز کا زیادہ سے زیادہ فاصلہ ایک گھنٹہ ہو گا اس لیے نتائج میں تاخیر نہیں ہو گی اور پریزائیڈنگ افسر وٹس ایپ پر نتائج بھیج دیں گے لیکن اگر پریزائیڈنگ افسر وٹس ایپ پر نہیں بھیج سکتا تو آر او آفس پہنچ جائے گا۔