روسی رکن پارلیمنٹ اور صدر پیوٹن کے نقاد کی بھارت میں پراسرار ہلاکت

0
93

نئی دہلی: روس کے رکن پارلیمنٹ اور روسی فوڈ انڈسٹری ولادیمیر اسٹینڈرڈ کے مالک پاویل اینتونوف بھارت میں پراسرار طور پر ہلاک ہو گئے ہیں۔

باغی ٹی وی:بھارتی ویب سائٹ اکنامک ٹائمز کے مطابق آنجہانی پاویل اینتونوف بھارتی ریاست اڑیسہ کے ایک ہوٹل میں مقیم تھے، اسی کی تیسری منزل پر واقع کھڑکی سے پراسرار طور پر گر کر ہلاک ہوئے ہیں۔

مردہ خانے کے ملازم کے انکشافات،سشانت سنگھ کی بہن کا بیان سامنے آ گیا

بھارتی پولیس نے 65 سالہ پاویل کی خون میں لت پت نعش ہوٹل کے باہر سے برآمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ پاویل کا شمار روس کے امیر ترین افراد میں ہوتا تھا، انہیں روسی پارلیمنٹ کا امیر ترین شخص بھی کہا جاتا تھا۔

حیرت انگیز طور پر پولیس کو 22 دسمبر کے دن اسی ہوٹل میں روس کے رکن پارلیمنٹ اینتونوف کے ساتھی ولادیمیر بدینوف بھی اپنے کمرے میں بیہوش ملے تھے جنہیں اسپتال لے جانے پر ڈاکٹروں نے بتایا تھا کہ وہ مر چکے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی پولیس کا کہنا ہے کہ بظاہر واقعہ خودکشی کا لگتا ہے کیونکہ پاویل اپنے دوست کی موت پر بیحد افسردہ تھے۔

نئی دہلی میں قائم روسی سفارتخانے کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ ریاست اڑیسہ کی پولیس کو پچھلے دو دنوں کے دوران اس کے دو شہریوں کی ایک ہی ہوٹل میں ہلاکت کے درمیان مجرمانہ تعلق یا کارروائی کے شواہد نہیں ملے ہیں۔

کریملن کو’بڑا دھچکا دینےوالےوار‘کی ہدایت اصل میں امریکا کی روسی صدرپیوٹن کو قتل…

سی این این کے مطابق بھارت کی شمال مشرقی ریاست اوڈیشہ کے ایک سینئر پولیس اہلکار وویکانند شرما نے بتایا کہ پولیس کا خیال ہے کہ اینتونوف کی موت رائاگڈا ضلع میں اپنے ہوٹل کی تیسری منزل سے گرنے کے بعد ہوئی، حالانکہ پوسٹ مارٹم رپورٹ ابھی تک جاری نہیں کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس کیس کو "غیر فطری موت” قرار دیا گیا ہے، جس میں حادثات اور خودکشی کے نتیجے میں ہونے والی اموات شامل ہیں۔

روس کی سرکاری خبر رساں ایجنسی تاس کے مطابق، اینتونوف، جو ایک تاجر اور مغربی روس کے علاقے ولادیمیر میں علاقائی پارلیمان کے رکن تھے، نے 22 دسمبر کو اپنی 65ویں سالگرہ منائی تھی۔

2018 میں، انٹوف روس کے 100 امیر ترین سرکاری ملازمین کی فوربس کی درجہ بندی میں سرفہرست تھے۔ فوربس روس کے مطابق، 2018 میں اس کی آمدنی تقریباً 9.97 بلین روبل تھی۔

یوکرین نے روس کو فروری میں مشروط امن مذاکرات کی پیشکش کر دی

وہ روسی پارلیمنٹ کی یونائیٹڈ رشیا پارٹی کے رکن تھے، جس کے پہلے سربراہ ولادیمیر پوتن تھے اور اب بھی روسی صدر کے سخت حامی ہیں۔

اینتونوف نے گزشتہ جون میں پیوٹن کے لیے اپنی حمایت کا وعدہ کیا جب وہ واٹس ایپ پر جنگ مخالف پیغام پوسٹ کرنے سے انکار کرنے پر مجبور ہوئےانہوں نے "بدقسمتی سے غلط فہمی اور تکنیکی خرابی” کا الزام لگایا اور کہا کہ اسٹیٹس کو حذف کر دیا گیا ہے۔

شرما نے کہا کہ روسی سفارت خانے سے رابطہ کیا گیا تھا اور طریقہ کار پر عمل کیا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ دونوں افراد کی لاشوں کے آخری رسومات کی اجازت دے دی گئی تھی۔

کلکتہ میں روسی قونصل جنرل الیکسی ایڈمکن نے پیر کے روز روسی سرکاری میڈیا آر آئی اے نووستی کو بتایا کہ اوڈیشہ ریاستی پولیس اور کلکتہ میں قونصلیٹ جنرل کو ہندوستان میں دو روسیوں کی موت میں کوئی مشتبہ چیز نظر نہیں آئی۔

رونالڈو کو ضائع کردیا گیا، ورلڈکپ میں اس پر سیاسی پابندی لگائی گئی،ترک صدر

"ہم دو روسی شہریوں کی ہلاکت سے آگاہ ہیں۔ ہم ان لوگوں کے لواحقین اور شہر کے محکمہ پولیس سے رابطے میں ہیں جہاں یہ واقعہ ہوا ہے۔ ہم مرنے والوں کے لواحقین کو کاغذی کارروائی میں تمام ضروری مدد فراہم کریں گے-

اس سال کم از کم ایک درجن ہائی پروفائل روسی تاجر مبینہ طور پر خودکشی یا نامعلوم حادثات میں ہلاک ہو چکے ہیں، جن میں سے چھ کا تعلق روس کی دو بڑی توانائی کمپنیوں سے ہے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق، غیر جوہری آبدوزیں بنانے میں مہارت رکھنے والے ایک بڑے روسی شپ یارڈ کے سربراہ الیگزینڈر بوزاکوف گزشتہ ہفتے اچانک انتقال کر گئے، حکام کی جانب سے موت کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی۔

ایلون مسک امریکا کے صدر بنیں گے، روس کی قومی سلامتی کے نائب سربراہ کی نئے سال کے…

انسٹی ٹیوٹ کے ایک بیان کے مطابق، ماسکو ایوی ایشن انسٹی ٹیوٹ کے سابق ریکٹر اناتولی گیراشینکو ستمبر میں ایک غیر متعینہ حادثے میں انتقال کر گئے تھے۔

تاس کے مطابق، Lukoil کے چیئرمین Ravil Maganov ستمبر کے آغاز میں ماسکو کے ایک ہسپتال کی کھڑکی سے گرنے کے بعد انتقال کر گئے۔

روس کے سرکاری میڈیا کے مطابق، ستمبر کے وسط میں، روسی تاجر ایوان پیچورین، جو کارپوریشن فار دی ڈویلپمنٹ آف دی ایسٹ اینڈ آرکٹک کے اعلیٰ مینیجر تھے، ولادی ووستوک میں مردہ پائے گئے۔ علاقائی میڈیا کی خبر کے مطابق، پیچورین 10 ستمبر کو ولادیووستوک میں کیپ اگناٹیف کے قریب ڈوب گئے۔

تاس کی خبر کے مطابق، لوکوئیل کے ایک اور اعلیٰ مینیجر، الیگزینڈر سببوٹن، مئی میں ماسکو کے قریب مردہ پائے گئے تھے جب مبینہ طور پر شمن سے ملنے گئے تھے۔

تائیوان اور امریکا کے عسکری تعاون کے جواب میں چین کا اپنی ’جنگی‘ طاقت کا مظاہرہ

Leave a reply