محسوس ہوتا ہے سنی اتحاد کونسل سے اتحاد کا فیصلہ صحیح نہیں تھا، بیر سٹر علی طفر نے بھی یہ فیصلہ غلط قرار دیا

0
108
ali zafar PTI

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما بیرسٹر علی ظفر نے بھی شیر افضل مروت کے موقف کی تائید کر دی ،انہوں نے کہا کہ محسوس ہوتا ہے سنی اتحاد کونسل سے اتحاد کا فیصلہ صحیح نہیں تھا، یہ فیصلہ جس نے بھی کیا اور جیسے بھی ہوا نظرِثانی کرنا پڑے گی۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے بیرسٹر علی ظفر نے کہا کہ شیر افضل مروت درست کہہ رہے ہیں کہ متحدہ وحدت المسلمین (ایم ڈبلیو ایم) کے ساتھ اتحاد کا فیصلہ ہوا تھا، اگلے دن فیصلہ تبدیل ہوگیا۔ علی ظفر نے مزید کہا کہ کور کمیٹی کی میٹنگ میں اتحاد کے معاملے پر کوئی بات نہیں ہوئی، یہ فیصلہ جس نے بھی کیا اور جیسے بھی ہوا نظرثانی کرنا پڑے گی، اتحاد کے لیے ایسا آپشن ہونا چاہیے تھا جہاں کوئی بحث ہی نہ ہو، قانون میں ابہام والا آپشن لینے کی ضرورت نہیں تھی۔ بیرسٹر گوہر نے کہا کہ ہماری غلطی یہ ہے کہ اتحادی پارٹی کے ساتھ ملنے کا معاملہ مس کمیونیوکیٹ ہوا جسکا خمیازہ ہم بھگت رہے ہے،انہوں نے کہا کہ شیرانی گروپ نے مخصوص نشستوں کی فہرست دی تھی ایم ڈبلیو ایم نے بھی دی تھی، بانی پی ٹی آئی نے کہا تھا کہ یہ مذہبی معاملہ نہیں، مخصوص نشستوں کیلئے پارٹی جوائن کرنی ہے۔

Leave a reply