ایٹمی جنگ سے بچنے کے لیے چینی صدر نے امریکی صدر جوبائیڈن کومحبت بھرا خط لکھ دیا

0
34

بیجنگ: ایٹمی جنگ سے بچنے کے لیے چینی صدر نے امریکی صدر جوبائیڈن کومحبت بھرا خط لکھ دیا ,اطلاعات کے مطابق امریکہ اور چین کے درمیان بڑھتی ہوئی کشیدگی کو کم کرنے اور دنیا کی ایٹمی جنگ سے بچانے کے لیے چینی صدر نے امریکی صدر کو خط لکھ کر دوستی کرنے کا پیغام دیا ہے ،

 

 

 

یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس خط میں چین کے صدر شی جن پنگ نے کہا ہے کہ شدید اختلافات کے باوجود علاقائی سلامتی اور عالمی مسائل پر امریکا کے ساتھ تعاون کے لیے تیار ہیں۔

 

 

عالمی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہےکہ اس خط میں اس عزم کا اظہار کیا گیا ہے  چین معاملات کے حل کےلیے پہل کررہا ہے جس کا امریکہ کو ضرور فائدہ اٹھانا چاہیے، چین کے صدر شی جن پنگ نے امریکا کے ساتھ مسائل پر بات چیت کے ساتھ حل کرنے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ اختلافات سے مناسب طریقے سے نمٹنے کے لیے امریکا کے ساتھ کام کرنے کے لیے تیار ہی

 

 

امریکی صدر جوبائیڈن کے نام اپنے خط میں چین کے صدر نے بار بار افہام و تفہم پر زور دیا ہے ، یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس خط میں کیا جو امریکا میں چین کے سفیر کن گینگ نے واشنگٹن میں یو ایس چائنا تعلقات کے قومی کمیٹی کے عشائیے میں پڑھ کر سنایا۔

 

 

 

امریکی صدر کے نام صدر شی جن پنگ کا اپنے خط میں مزید کہنا تھا کہ ہمارے درمیان اختلافات موجود ہیں لیکن اس کے باوجود چین علاقائی اور عالمی مسائل پر امریکا کے ساتھ تعاون کے لیے تیار ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ امریکہ کواس پیشکش سے بھرپورفائدہ اٹھانا چاہیے

 

 

یاد رہےکہ چین کے صدر کا مفاہمتی خط اس وقت سامنے آیا ہے جب چین امریکا کے صدور کی ورچوئل میٹنگ آئندہ ہفتے منعقد ہو رہی ہے جس میں دونوں ممالک کے درمیان تناؤ کا سبب بننے والے مسائل پر گفتگو کی جائے گی۔

 

 

 

یہ بھی یاد  رہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے معاشی جنگ کو پسندیدہ قرار دیتے ہوئے چین پر اقتصادی پابندیاں عائد اور چینی مصنوعات پر ٹیکس کی شرح میں اضافہ کردیا تھا جس کے جواب میں چین نے بھی ایسا ہی کیا اور یہ مشق تاحال جاری ہے۔اب بھی یہی گمان کیا جارہا ہے کہ ماضی کے تجربات بتاتے ہیں کہ ان خطوط اور دیگرچینل سے سفارتی معاملات میں کوئی بہتری نہیں آئے گی ، کیونکہ امریکہ اور چین دونوں ایک دوسرے کو مات دینے کے چکروں میں ہیں

Leave a reply