لال مسجد اسلام آباد میں طالبات کوگستاخ کا سرتن سے جدا کرنے کی اصلی تلوارسے تربیت:ویڈیووائرل

اسلام آباد:لال مسجد اسلام آباد میں طالبات کوگستاخ کا سرتن سے جدا کرنے کی تربیت: ،اطلاعات کے مطابق پاکستان کی معروف ترین لال مسجد جو کہ اسلام آباد جیسے بین الاقوامی شہر میں آباد ہے ، ایک بارپھرایسے دورسے گزررہی ہے جس طرح سابق صدرجنرل پرویزمشرف کے دور میں خود ساختہ نفاذشریعت گورننس باڈی بنائی گئی تھی

ذرائع کے مطابق پچھلے ایک ہفتے سے لال مسجد اسلام آباد میں خواتین معلمات اپنی طالبات کوگستاخ رسول کا سرتن سے جدا کرنے کی تربیت دی رہی ہیں ، اس دوران سیکڑوں طالبات کو کھلے میدان میں جمع کرکے ان کے سامنے ایک معملہ تلوار لے کرپہلے گستاخ رسول کی گستاخی کی سزا بتاتی ہے اورپھراپنی ان طالبات کو بتاتی ہیں کہ آپ نے ایک گستاخ کا سرکیسے قلم کرنا ہے

ذرائع کے مطابق اس حوالے سے ایک ویڈیو بھی وائرل ہوئی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہےکہ وہ معلمہ پہلے موبلائزیشن کے ذریعے طالبات کا خون گرماتی ہے اورپھر ان کے سامنے ایک فرضی گستاخ کا سربنا کراصلی تلوار سے اس کا سرتن سے جدا کردیتی ہے

لال مسجد اسلام آباد میں طالبات کو گستاخ کا سر تن سے جدا کرنے کی پریکٹس کروائی جارہی ہے۔ پھر بھی پوچھتے ہیں دنیا ہمیں دہشت گرد ریاست کیوں سمجھتی ہے؟

دوسری طرف اس وقت سوشل میڈیا پربحث چل رہی ہے جس میں یہ اعتراض اٹھایاجارہاہےکہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.