fbpx

ٹوئٹر نے کمیونیٹیز میں انگیجمنٹ کو بڑھانے کیلئے نیا طریقہ متعارف کرا دیا

ٹوئٹر نے کمیونیٹیز میں انگیجمنٹ کو بڑھانے کے لیے ایک نیا طریقہ متعارف کرا دیا۔

باغی ٹی وی : ٹوئٹر کی جانب سے متعارف کرائے گئے اس نئے فیچر میں کمیونیٹی کے ایڈمن ٹیب کے اوپر ٹوئٹس کو پِن کر کے انگیجمنٹ بڑھا سکیں گے ٹوئٹر کمیونیٹی موڈ میں ’پِن ٹو کمیونیٹی‘ کاایک نیا آپشن کسی بھی کمیونیٹی ٹوئٹ کو فِیڈ کےاوپری سرے پرتعین کردے گا اوروہ ٹوئٹ بطور نوٹس کام میں لایا جاسکےگا یہ آپشن صارفین کی ٹوئٹر کمیونیٹیز میں مزید بہتر انگیجمنٹ لانے میں مدد گار ثابت ہو سکے گا۔

ٹوئٹر نے اس حوالے سے اپنے بیان میں کہا کہ کچھ ٹویٹس اسپاٹ لائٹ کے مستحق ہیں، یہی وجہ ہے کہ موڈز اور ایڈمنز اب اپنی کمیونٹی ٹویٹس کو ویب پر پن کر سکتے ہیں۔ اس خصوصیت کی بہت زیادہ درخواست کی گئی تھی اور ہم یہ دیکھ کر بہت پرجوش ہیں کہ آپ اسے کیسے استعمال کرتے ہیں موڈز اور ایڈمنز کے لیے iOS اور Android پر اپنی کمیونٹی ٹویٹس کو پن کرنے کا یہ فیچر جلد پیش کیا جائے گا-

یہ آپشن آپ کی ٹویٹر کمیونٹیز میں زیادہ توجہ مرکوز کرنے میں مدد کر سکتا ہے – اگرچہ ٹویٹر کا زیادہ منسلک کمیونٹیز آپشن واقعی سروس کے لیے موزوں رہے گا یا نہیں یہ ایک اور سوال ہے اب تک کمیونیٹیز کی محدود انگیجمنٹ سامنے آنے کے باوجود یہ فیچر ٹوئٹر سے ہٹتا نہیں دِکھائی دے رہا اور اس کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ ٹوئٹر مختلف معاملات پر لوگوں کے خیال کا احترام کرتے ہوئے اپنی رائے پیش کرنے کا حق دیتا ہے۔

لیکن کمیونیٹیز اس کے مخالف سمت میں جاتی ہے اور گفتگو کو محدود رکھنے کےکچھ فوائد بھی ہو سکتے ہیں لیکن کیا یہ ٹوئٹر کے لیے کارگر ہے، جہاں صارفین کی اکثریت اپنے خیالات کو اپنے فالوورز کے ساتھ شیئر کرنے کا سوچتی ہے۔

واضح طور پر، یقینی طور پر اس طرح کی گنجائش موجود ہے، ٹوئٹر صارفین مختلف موضوعات کے لیے متبادل ٹوئٹر ہینڈل بنا رہے ہیں۔ یعنی اگر کوئی صارف کرکٹ کا شوقین ہے اور ڈیجیٹل مارکیٹنگ بھی کرتا ہے تو اس کی مختلف فیڈ اور آڈینس ہو سکتی ہے، جس پر اس کے موضوع کے حساب سے ٹوئٹس موجود ہوں گی۔ فیڈ پر وہ غیر ضروری ٹوئٹس موجود نہیں ہوں گی جس سے اس کا کوئی تعلق نہیں ہوگا۔

کمیونٹیز اس کو حل کرنے کے لیے ایک ذریعہ فراہم کرتی ہیں – اگرچہ ٹویٹر کے پاس دوسرے، زیادہ عملی حل موجود ہیں جو صارف کے رویے کو تبدیل کرنے اور ان کی بات چیت کی رسائی کو محدود کرنے کے برعکس، ٹویٹر کے حتمی استعمال کے معاملے کے ساتھ بہتر طور پر موافق نظر آتے ہیں۔

‘Facets’ نامی یہ آپشن، جو ٹویٹر نے گزشتہ جولائی شیئر کیا تھا، صارفین کو ایک پروفائل سے مختلف عنوانات کے بارے میں ٹویٹ کرنے کے قابل بنائے گااس کے بعد ان کے فالوورز یہ منتخب کر سکیں گے کہ وہ کون سے عناصر اور ٹویٹس کی پرواہ کرتے ہیں، یا نہیں کرتے۔