وزارت اطلاعات کے زیراہتمام ڈائمنڈ جوبلی ادبی کتاب میلہ

0
40

انفارمیشن سروس اکیڈمی اور ڈائریکٹوریٹ آف الیکٹرانک میڈیا اینڈ پبلی کیشنزوزارت اطلاعات کے زیراہتمام ڈائمنڈ جوبلی ادبی کتاب میلہ منعقد کیا گیا جسے مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد باالخصوص نوجوانوں، میڈیا ، سینئر حکام اور سماجی و ادبی حلقوں کی طرف سے زبردست پذیرائی ملی۔ وفاقی سیکرٹری اطلاعات ونشریات شاہیرہ شاہد نے اس موقع پر ایک روزہ نمائش کا افتتاح کیا اور مختلف سٹالز کا دورہ کیا۔

پاکستان کی تاریخ ، ثقافت، کھیل، سیاحت اور ادب سے متعلق دو ہزار سے زائد کتب نمائش کے لئے رکھی گئی تھیں جو’’ مسٹر بکس ‘‘ اسلام آباد کی طرف سے مہیا کی گئی تھیں جس کے منیجنگ ڈائریکٹر عبداللہ یوسف بھی تقریب میں موجود تھے۔ڈائریکٹوریٹ آف الیکٹرانک میڈیا اینڈ پبلی کیشنزوزارت اطلاعات نے بھی اپنی تازہ ترین مطبوعات اور ڈیجیٹل تصویری مجموعوں کا خصوصی سٹال لگایا۔ ڈائریکٹوریٹ نے یوم آزادی کی مناسبت سے تیار کی گئی دستاویزی فلمیں اور قومی نغمے بھی دکھائے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی سیکرٹری اطلاعات ونشریات شاہیرہ شاہد نے کہا کہ کتاب میلہ پاکستان کی ڈائمنڈ جوبلی تقریبات کا حصہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کتاب ہماراورثہ ہے، اسے نظر انداز نہیں کیاجاسکتا ،باالخصوص نوجوانوں اور تعلیمی اداروں میں کتب بینی کافروغ وقت کی اہم ضرورت ہے، اس کےلئے ہم سب کو اپنا کرداراداکرناہو گا۔انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کا قومی تعمیر میں اہم کردار ہے لہٰذا انہیں علم پر دسترس کی ضرورت ہے اور کتب علم کے حصول کا بہترین ذریعہ ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی 75 ویں سالگرہ منانے کاسلسلہ بھرپور انداز میں جاری ہے۔ وزارت اطلاعات کے تمام ادارے اس میں اپنا اپنا کردارادا کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کتاب میلے کے انعقاد کامقصد لوگوں میں کتب بینی کو فروغ دینا ہے۔ ہم کتب بینی کی جانب لوگوں کی دلچسپی میں اضافہ کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ہماری پوری کوشش ہوگی کہ اس کتاب میلہ سے لوگ زیادہ سے زیادہ مستفیدہوں۔

وفاقی سیکرٹری اطلاعات نے کہا کہ پاکستان کی 75 ویں سالگرہ کے موقع پر ڈیجیٹل فوٹو گرافی کی نمائش میں پاکستان کی 75 سالہ تاریخ کو ڈیجیٹل طریقے سےپیش کیاجائےگا۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی وی اور پاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے اپنے پرانے فنکاروں کو سراہنے کےلئے تقریبات کااہتمام کیا ہے۔ وفاقی سیکرٹری اطلاعات نے کہاکہ ہم نےقومی ترانے کی جدید طریقے سے ری ریکارڈ نگ کی ہے ،ترانے کے الفاظ میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی صرف اس کی ریکارڈنگ میں جدت لائی گئی ہے۔ ہم قوم کو 75 ویں سالگرہ پر قومی ترانے کا یہ تحفہ پیش کریں گے۔ اس موقع پرانہوں نے مسٹر بکس کا سٹالز لگانے ، تقریب کے شرکا اور میڈیا کاشکریہ ادا کیا

۔ تقریب سے ڈائریکٹر جنرل انفارمیشن سروس اکیڈمی سعید جاوید اور ڈائریکٹر جنرل ڈائریکٹوریٹ آف الیکٹرانک میڈیا اینڈ پبلیکیشنز عمرانہ وزیر نےکتب میلے کے پس منظر پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ یہ نمائش پاکستان کی 75 ویں سالگرہ کی تقریبات کے سلسلہ میں ہے اور اس کا مقصد نوجوانوں میں کتب بینی کو فروغ دینا ہے یہی وجہ ہے کہ تقریب میں نوجوانوں کو بڑی تعداد میں مدعو کیا گیا ہے ۔

مسٹر بکس کے منیجنگ ڈائریکٹر عبداللہ یوسف نے اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انفارمیشن سروس اکیڈمی اور ڈائریکٹوریٹ آف الیکٹرانک میڈیا اینڈ پبلی کیشنز کے اس اقدام کو سراہا اور کہا کہ ان کے بک ہائوس سے اس خصوصی نمائش کے لئے کتب کی فراہمی سے بے حد خوشی ہوئی ہے۔ بعدازاں ایوارڈ کی تقریب میں انفارمیشن سروس اکیڈمی اور ڈائریکٹوریٹ آف الیکٹرانک میڈیا اینڈ پبلی کیشنز کے ڈائریکٹر جنرلز نے مہمان خصوصی وفاقی سیکرٹری اطلاعات ونشریات شاہیرہ شاہد اور مسٹر بکس کے مالک عبداللہ یوسف کو خصوصی یادگاریں پیش کیں۔

شرکاء نے نمائش کے لئے رکھی گئی کتب میں بے حد دلچسپی کا اظہار کیا اور اپنی پسند کی کتب خریدیں جن میں زیادہ ترکتب تاریخ ، کھیلوں اور پاکستانی ثقافت بارے تھیں۔شرکاء نے ادب اور دیگر موضوعات پر کتب بھی خریدیں۔ تمام کتب پر دس فیصد کی خصوصی رعایت دی گئی تھی اور شرکاء نے اس رعایت کا زبردست فائدہ اٹھایا۔

Leave a reply