fbpx

علم ایک طاقت ہے تحریر: عاصمہ قریشی

 اس جملے کے مختلف ورژن ثقافتوں کیساتھ زمانے بھر میں موجود ہے۔ 10 ویں صدی میں فقرہ کی تاریخ کے پہلے ورژن، جیسے نہج البلاگہ میں:

 "علم طاقت ہے اور یہ اطاعت کا حکم دے سکتا ہے،”

 یا پھر فارسی شاعر فردوسی کے الفاظ:

 "قابل وہ ہے جو عقلمند ہے۔”

 بائبل کتاب میں ایک عبرانی جملہ ہے جس کا تقریبا ایک ہی ترجمہ کیا گیا تھا۔ مثال کے طور پر لاطینی میں سب سے پہلے:

 "ور ساپاانس اٹ فورٹاس ایسٹ اٹ ور دوکٹوس روبسٹوس اٹ والادو،”

 اور پھر انگریزی بادشاہ جیمز بائبل مثال کے طور پر:

 "ایک عقلمند آدمی مضبوط ہے، علم آدمی کی طاقت میں اضافہ کرتا ہے۔”

 علم طاقت کا مطلب یہ ہے کہ کسی شخص کو اس علم کا استعمال کرتے ہوئے اپنی زندگی پر تعلیم اور مکمل کنٹرول ہے. تعلیم یافتہ افراد زندگی میں چیزوں کو آسانی سے سنبھال سکتے ہیں۔ علم سب سے مضبوط ذریعہ ہے جو لوگوں کو طاقت فراہم کرتا ہے اور علم کو زمین پر کسی اور طاقت سے شکست نہیں دی جاسکتی ہے۔ ہم یہ بھی کہہ سکتے ہیں کہ، علم ایک ایسے شخص کو طاقت دیتا ہے جو اپنے حقوق کی جنگ لڑتا ہے اور دنیا کا مقابلہ کرتا ہے۔ علم نے انسان اور جانور میں فرق پیدا کیا ہے۔ انسانوں کا جسمانی طاقت میں جانوروں سے موازنہ نہیں کیا جاسکتا لیکن، انسان صرف علم کی طاقت کی وجہ سے زمین پر سب سے طاقتور مخلوق رہا ہے۔ انسان جسمانی طاقت میں جانوروں سے کمزور ہے. انسان علم سے قوت حاصل کرتا ہے اور جسمانی قوت پر انحصار نہیں کرتا۔ انسان زمین پر بہت تیز اور سمجھ دار مخلوق ہے کیونکہ وہ اپنے علم، تحقیق اور تجربات سے دنیا کو بدلنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

علم انسان کو یہ جاننے کی طاقت دیتا ہے کہ فطرت کی قوتوں کو کس طرح کنٹرول کرنا ہے اور فوائد حاصل کرنے کے لئے ان کا استعمال کرنا ہے۔ علم حاصل کرنا ہماری زندگی کا اہم حصہ ہے۔ علم کے ذریعے ہم صحیح اور غلط، اچھا یا برا کے درمیان فرق کرنے کے قابل ہیں۔ علم ہماری مستقبل کی منصوبہ بندی میں ہماری مدد کرتا ہے اور ہمیں صحیح راستے پر گامزن کرتا ہے۔ اس سے ہمیں اپنی کمزوریوں، غلطیوں پر قابو پانے کے ساتھ ساتھ زندگی میں مشکلات کا سامنا کرنے اور ان پر جلد از جلد قابو پانے میں بھی مدد ملتی ہے۔ علم انسان کو زندگی میں ذہنی اور اخلاقی ترقی دے کر زیادہ طاقتور بناتا ہے۔ معاشرے اور ملک میں مثبت تبدیلیاں لانے کے لئے علم ایک نہایت اہم ذریعہ ہے۔ ہم کہہ سکتے ہیں کہ علم ہی کامیابی اور خوشی کا ستون ہے۔ اس لیے ہمیں علم حاصل کرنا چاہیے اور ایمانداری سے کام کرنا چاہیے اور اپنے معاشرے کو برائی سے بچانا چاہیے مختصر یہ کہ علم لوگوں کو لڑائی جھگڑوں اور دیگر معاشرتی برائیوں سے دور رکھ کر معاشرے میں امن قائم رکھتا ہے۔

سیاہ طرز میموری مٹانے والا چھڑی قسم کی صورتحال میں ایک مرد کی کمی، میں ایسی صورتحال کا تصور نہیں کرسکتا جہاں کوئی آپ سے آپ کا علم لے سکے۔

 یہاں تک کہ اگر باقی سب کچھ آپ سے، اپنے مال، آپ کی سماجی حیثیت، یا آپ کی صحت کی طرح لیا گیا تھا -آپ اب بھی آپ کو آپ کو یاد کرنے کا انتظام کر سکتے ہیں کہ سیکھا ہے تمام معلومات پڑے گا۔

دراصل، اگر آپ نے اس طرح کے بدترین صورت حال کو برداشت کیا تو آپ شاید اس سے زیادہ علم کے ساتھ ختم ہوجائیں گے۔ حکمت بھی، یقینی طور پر۔ جو مجھے میرے اگلے نکتے پر لاتا ہے:

 یہ بہترین چاندی کی پرت ہے

 اس بات سے کوئی فرق نہیں پڑتا ہے کہ آپ کی زندگی میں مکمل طور پر پاگل گڑبڑ چیزیں کم ہوجاتی ہیں، آپ تجربے کے لئے سمجھدار ہوں گے۔

 اگر اس مخصوص لمحے میں چیزیں خوفناک ہیں تو، آپ کم از کم اس حقیقت میں راحت حاصل کرسکتے ہیں کہ آپ کو یہ تسلی انعام کے طور پر ہوگی۔ کبھی کبھی یہ بھی اس سے زیادہ سے زیادہ اضافہ کرنے کے لئے بھی جاتا ہے -صرف ایک خلاصہ زندگی میں شرکت کی ٹرافی کے بجائے کچھ حد تک مفید ہے.

آپ کو یہ معلوم کرنا ختم ہوسکتا ہے کہ آپ نے جو کچھ سیکھا وہ اس سے کہیں زیادہ قیمتی تھا جس کے بارے میں آپ نے سوچا کہ آپ کھو گئے ہیں، یا فیصلہ کریں کہ آپ جو بھی تکلیف سے گزرے وہ اس کے قابل تھا جس کے بارے میں آپ کو اپنے بارے میں یا زندگی کے بارے میں معلوم ہوا۔

 یہ ہمیں آزاد کرتا ہے

 علم ہمیں دنیا میں زندہ رہنے اور پنپنے کی صلاحیت فراہم کرتا ہے۔ یہ آزادی ہے، اور آپ کے اندر آزادی کے بغیر حقیقی طاقت نہیں ہے.

مزید علم ہمیں بہتر طور پر فیصلے کرنے کے قابل بناتا ہے، نیز اس منطقی اور اخلاقی بنیادوں کا فیصلہ کرنا ہے جس پر ہم اپنے فیصلے کر رہے ہیں۔

 علم اور حکمت ہمیں بہتر انتخاب کرنے میں مدد کرتی ہے. جب ہم بہتر انتخاب کرتے ہیں تو ہم خود کا زیادہ احترام کرتے ہیں، اور جب ہم خود کا زیادہ احترام کرتے ہیں تو، ہم بہتر انتخاب جاری رکھنا چاہتے ہیں۔ یہ سائیکل طاقتور ہے۔

 جب یہ واضح ہوجائے کہ ہم اپنی عزت کرتے ہیں تو دوسرے بھی ہماری زیادہ عزت کرنے آتے ہیں جو بے حد طاقتور بھی ہے۔

 اس بات سے انکار نہیں ہے کہ علم طاقت ہے -لیکن یہ بھی یاد رکھنا ضروری ہے

 بڑی طاقت کے ساتھ بڑی ذمہ داری آتی ہے.

 کبھی بھی سیکھنے سے باز نہ آئیں، اور اپنی طاقتوں کو اچھے کام کے لئے استعمال کرنا یاد رکھیں۔

Twitter ID: ‎@AQsmt2

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!