fbpx

بحرین کا سفیر اسرائیل میں تعینات ، حماس نے اس تعیناتی پر کیا کہا

بحرین کا سفیر اسرائیل میں تعینات ، حماس نے اس تعیناتی پر کیا کہا

باغی ٹی وی : اسرئیل کے خلاف برسر پیکار فلسطین کی مزاحمتی محاذ حماس نے مقبوضہ فلسطین میں بحرینی سفیر کی تعیناتی کی مذمت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیل کے ساتھ تعلقات کی برقراری دراصل علاقے میں اسرائیل کے مفادات کی حفاظت کرنا ہے اور یہ عرب قوم اور فلسطینی کاز کو نقصان پہنچانے اور صیہونی حکومت کو فلسطینی عوام کے خلاف اسرائیلی جارحیت کیلئے مزید گستاخ بنانے کا باعث بن سکتا ہے۔

واضح رہے کہ بحرین کے شاہ حمد بن عیسیٰ آل خلیفہ نے اسرائیل کے لئے پہلے سفیر کی منظوری دے دی ہے۔ بحرین کی وزارت خارجہ کے مطابق شاہ بحرین حمد بن عیسیٰ آل خلیفہ نے شاہی فرمان کے ذریعے سفارتکار خالد یوسف الجلاہمہ کی اسرائیل میں بحرین کے پہلے سفیر کے طور پر تعیناتی کی توثیق کردی۔

یاد رہے کہ بحرین نے گزشتہ برس سابق امریکی صدر ٹرمپ کے دباو میں آ کر وائٹ ہاؤس میں ہونے والی تقریب میں اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرنے کا باضابطہ اعلان کیا تھا۔بحرین سے قبل متحدہ عرب امارات، مصر اور اُردن اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کر چکے ہیں.خیال رہے کہ گزشتہ سال بحرین نے متحدہ عرب امارات کے ہمراہ وائٹ ہاوس میں اسرائیل سے تعلقات قائم کرنے کے معاہدے پر دستخط کیے تھے

مائیک پومپیو نے سعودی عرب کے حوالے سے کہا کہ ‘وہ خطے کی بدلتے حالات کا موجب ہیں اور یہ ممالک ایرانی کے اثر و رسوخ کو روکنے اور علاقائی تعاون کی ضرورت کو صحیح سمجھتے ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.