بلوچستان میں 10 ہزار اساتذہ کی تقرری کا معاملہ التواء کا شکار

3 ہزار سے زائد پرائمری اسکولز بند ،ایک سال سے تعلیمی نظام مفلوج ہو کر رہ گیا
0
157
baloch

ڈیرہ مراد جمالی (محبوب مگسی ) معروف علمی، ادبی اور سماجی تنظیم ” کیئر نصیر آباد ” کے صدر آغا نیاز مگسی کی تنظیمی سروے میں بلوچستان کے تعلیمی اداروں کے حوالے سے ایک مزید تشویشناک انکشاف کیا گیا ہے کہ گزشتہ ایک سال سے بلوچستان کے پرائمری اسکولوں میں خالی اسامیوں پر 10 ہزار اساتذہ اور استانیوں کی تقرری کا معاملہ التواء کا شکار ہے جس کے باعث 3 ہزار سے زائد بوائز و گرلز پرائمری اسکول بند پڑے ہیں جس سے بلوچستان میں بنیادی تعلیم اور درس و تدریس کا نظام مفلوج ہو کر رہ گیا ہے ذرائع کے مطابق 10 ہزار اساتذہ کےانٹرویوز اور ٹیسٹ رپورٹ کی روشنی میں محکمہ تعلیم بلوچستان کی جانب سے تقرریوں کے احکامات جاری کئے گئے لیکن ایک شہری کی جانب سے تقرریوں کو میرٹ کے برعکس قرار دے کر بلوچستان ہائی کورٹ میں نظرثانی کی درخواست دائر کی گئی جس کی سماعت گزشتہ 6. ماہ سے جاری ہے لیکن تا حال کوئی فیصلہ سامنے نہیں آ سکا ہے۔

Leave a reply