بابا گرونانک کا جنم دن: کرتار پور راہداری سے بھارتی سکھ یاتریوں کی پاکستان آمد کا سلسلہ جاری

0
36

کرتار پور راہداری اور واہگہ بارڈر کو بھارتی سکھ برادری کیلئے کھولا گیا ہے اوربابا گورو نانک کے 552ویں جنم دن کے لیے کرتار پور راہداری سے بھارتی سکھ یاتریوں کی آمد کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے جس کے لیے 18 امیگریشن کاؤنٹر فعال کردیئے گئے ہیں۔

باغی ٹی وی : سی ای او کرتارپور راہداری محمد لطیف کے مطابق یاتریوں کو کورونا ٹیسٹ کے بعد دربار لایا جائے گا صدر سکھ پر بندھک کمیٹی سردار امیر سنگھ یاتریوں کا استقبال کریں گے محمد لطیف نے کہا کہ بھارتی یاتری ساڑھے سات بجے پاکستانی حدود میں داخل ہوں گے اور صبح ساڑھے 7 بجے سے شام 5 بجے تک قیام کر سکیں گے۔

سکھوں اور مسلمانوں کو مارنا بی جے پی کا نظریہ اور ارمان ہے : راہل گاندھی

سیکرٹری جنرل نے کہا کہ بابا گرونانک کے جنم دن کی تقریبات سے متعلق پاکستان نےخصوصی اقدامات کیے ہیں کرتار پور راہدری پاکستان کی رواداری اور مذہبی آزادی کی مکمل عکاس ہے-

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ کرتارپور راہداری کا کھلنا اچھی پیش رفت ہے پاکستان نے تین ماہ کیلئے کرتارپور راہداری کو بند کیا تھا، جبکہ بھارت نے گزشتہ 20 ماہ سے کرتارپور راہداری پر قدغن لگا رکھی تھی-

سالانہ عرس حضرت نظام الدین اولیا ؒپربھارت کیجانب سے پاکستانی زائرین کوویزے جاری نہ…

چیئرمین متروکہ وقف املاک بورڈ کے مطابق 3 ہزار سکھ یاتری آج واہگہ بارڈر کے راستے پاکستان آئیں گےبابا گورونانک کے جنم دن کی مرکزی تقریب 19 نومبر کو ننکانہ صاحب منعقد ہوگی۔

چیئرمین متروکہ وقف املاک بورڈ نے بتایا کہ یاتریوں کو سیکیورٹی، ٹرانسپورٹ اور دیگر سہولیات دے رہے ہیں۔

پاکستان نے 3 ہزار سکھ یاتریوں کو ویزے جاری کر دیئے


خیال رہے کہ وزیر اعظم عمران خان نے سکھ یاتریوں سہولت فراہم کرنے کے لیے نومبر 2019 میں گرو نانک کے 550ویں یوم پیدائش کے موقع پر ویزا فری کرتارپور صاحب کوریڈور کے تاریخی افتتاح سمیت متعدد اقدامات اٹھائے ہیں نیا تعمیر شدہ گوردوارا کرتارپور صاحب کمپلیکس پاکستان کے عوام اور اس کی قیادت کی طرف سے بھارت اور دنیا بھر کی سکھ برادری کے لیے تحفہ ہے۔

Leave a reply