سگریٹ کی سمگلنگ میں ایف بی آر کی ملی بھگت کا خدشہ، وزیراعظم کا نوٹس

وزیراعظم کی زیر صدارت وفاقی کابینہ اجلاس منعقد کیا گیا- کابینہ اجلاس میں آزاد کشمیر ،فاٹا اور دیگر علاقوں سے سگریٹ سمگلنگ کی رپورٹ پیش کی گئی-

وزیراعظم کی زیر صدارت وفاقی کابینہ اجلاس میں پیش کی جانے والی رپورٹ میں بیان کیا گیا کہ ہر سال قومی خزانے کو 140 ارب روپے سمگلنگ کے باعث نقصان پہنچ رہا ہے- سمگل شدہ سگریٹ 20 روپے کا اور ٹیکس دینے والی کمپنیاں 90 روپے میں دیتی ہیں-

وزیراعظم نے سگریٹ کی سمگلنگ کے معاملے کا بھی نوٹس لے لیا- وزیراعظم نے کہا کہ یہ پہلے بھی میرے علم میں آئی تھی، اب معاملہ نظرانداز نہیں کر سکتے- وزیراعظم نے ایف بی آر اور متعلقہ حکام سے رپورٹ طلب کر لی- ان کا کہنا تھا کہ لگتا ہے اس معاملے میں بھی ایف بی آر کی ملی بھگت ہے- کیا شوگر مافیا کے ساتھ ایف بی آر نہیں ملی ہوئی تھی- کیا ایران سے تیل کی سمگلنگ میں ایف بی آر نہیں ملی ہوتی تھی- کسٹم حکام، خیبرپختونخوا، آزاد کشمیر حکومت سے بھی ٹریکنگ سسٹم پر بات کی جائے-

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.