fbpx

لاہور میں 10 سالہ گھریلو ملازمہ پرمالکان کا تشدد، میاں بیوی گرفتار

لاہور: 10 سالہ گھریلو ملازمہ پر مالکان کی جانب سے تشدد کے بعد پولیس نے چھاپہ مار کر متاثرہ بچی کو بازیاب کروا لیا۔اطلاعات کے مطابق اقبال ٹاؤن کے علاقے میں 10 سالہ بچی فاطمہ فرحان نامی شخص کے گھر پر تین ماہ سے گھریلو ملازمہ کے طور پر کام کرتی تھی۔ ظالم مالکن اور اسکا شوہر فرحان بچی پر تشدد کرتے تھے۔

اطلاع ملنے پر پولیس نے بچی کو بازیاب کر کے تشدد کرنے والے میاں بیوی کو حراست میں لے لیا، متاثرہ بچی فاطمہ کا کہنا تھا کہ مالکن اس پر تشدد کرتی اور والدین سے بات نہیں کرواتی تھی۔

پولیس کا کہنا ہے گرفتار ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔ متاثرہ بچی کا میڈیکل کروانے کے بعد چائلڈ پروٹیکشن بیورو کے حوالے کیا جائے گا۔

ادھر ایک اور واقعہ میں بہاولپور میں نوجوان کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنانے والے ملزم محمد عاشق کو شیخوپورہ سے گرفتار کرلیا گیا۔

پولیس کے مطابق تشدد کی ویڈیو وائرل ہونے کے بعد ملزم نے یزمان سےفرار ہوکر شیخوپورہ میں پناہ لے رکھی تھے۔ ملزم کو بہاولپور منتقل کرنے کیلیے اقدامات کیے جارہے ہیں۔

تفتیشی حکام کے مطابق نوجوان کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنانے والے ملزم تفتیش جاری ہے،تمام حقائق جلد سامنے آجائیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں نوجوان کو ایک شخص پر بری طرح تشدد کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔