مقبوضہ جموں و کشمیر، صدر راج ختم، نوٹیفیکیشن جاری

0
57

مقبوضہ جموں و کشمیر میں گزشتہ دو سال سے نافذ صدر راج آج جمعرات یعنی 31 اکتوبر کوختم کر دیا گیا۔

مقبوضہ کشمیر، گورنرکے مشیر نے استعفیٰ دے دیا

بھارتی میڈیا کے مطابق مرکزی وزارت داخلہ نے جمعرات کو ایک نوٹیفکیشن جاری کیا ہے،جس کے مطابق بھارتی صدر رام ناتھ کووند نے مقبوضہ جموں کشمیر سے صدر راج ہٹانے کی منظوری دے دی ہے۔

نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ صدر نے 19 دسمبر 2018 کو جموں کشمیر میں صدر راج لگانے سے متعلق حکم کو واپس لے لیا گیا ہے۔ مقبوضہ جموں وکشمیر کے مرکز کے زیر انتظام دوعلاقوں- جموں کشمیر اور لداخ میں تقسیم ہونے اور ان دونوں کے مرکز کے زیر انتظام ریاستوں کے آج وجود میں آنے کے بعد یہ قدم اٹھایا گیا ہے۔

بھارت نے مقبوضہ کشمیر کا پرچم اور آئین بھی ختم کردیا

واضح رہے کہ مودی حکومت نے رواں سال پانچ اگست کو جموں کشمیر تشکیل نو بل منظور کر کے ریاست کو دو ریاستوں میں تقسیم کر دیا تھا۔ بل کے مطابق 31 اکتوبر کو یہ دونوں مرکز کے زیر انتظام علاقے وجود میں آ جائیں گے۔

مقبوضہ کشمیر، یورپی وفد کو عام لوگوں سے ملنے نہیں دیا گیا، ایسا کس نے کہا؟

یادرہے کہ جون 2017 میں جموں و کشمیر میں پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی)کی رہنما وزیر اعلی محبوبہ مفتی نے استعفیٰ دے دیا تھا۔ بعد ازاں ریاست میں پہلے چھ ماہ گورنر کی حکومت رہی اور اس کے بعد وہاں صدر راج لگایا گیا تھا۔

Leave a reply