fbpx

جیل جا کر بڑے بڑے سیدھے ہو جاتے ہیں، مریم نواز بھی جیل جا کر”شریف” بن گئیں

جیل جانے کے بعد مریم نواز نے بھی ہاتھ میں تسبیح پکڑ لی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ ن کی رہنما ،سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کو احتساب عدالت میں پیش کیا گیا ،عدالت نے مریم نواز کے جسمانی ریمانڈ میں ایک ہفتے کی توسیع کر دی، مریم نواز سے عدالت میں ان کے شوہر کیپٹن ر صفدر، حمزہ شہباز ،عظمیٰ بخاری و دیگر نے ملاقات کی

مریم نوازکمرہ عدالت میں اپنے وکیل کے ہمراہ بھی مشاورت کرتی رہیں، مریم نواز کو نیب حکام جب عدالت لایا گیا تو ن لیگ کے کارکنان نے نعرے بازی کی ، کمرہ عدالت میں بھی ن لیگی کارکنان نعرے لگاتے رہے

مریم نواز نے کمرہ عدالت میں ڈیجیٹل تسبیح ہاتھ میں پکڑی ہوئی تھی، مریم نواز وکلاء اور پارٹی رہنماؤں کے ساتھ بات چیت بھی کرتی رہیں اور تسبیح بھی پڑھتی رہیں، مریم نواز کو اسے قبل بھی عدالت میں پیش کیا جاتا رہا لیکن اس بار حیران کن تبدیلی ان کے ہاتھ میں تسبیح دیکھنے کی محسوس ہوئی،

عدالت پیشی کے موقع پر غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے یوسف عباس کا کہنا تھا کہ نیب کے تمام ملزمان کے لیے گھر کا کھانا آتا ہے ،صرف میرے لیے اورمریم نواز کے لیے گھر کا کھانا بند ہے ،میں نے انھیں کہا کہ گھر کے کھانے سے سانسیں بڑھنی نہیں اور نیب کے کھانے سے گھٹنی نہیں ،یہ چھوٹی سوچ کی عکاسی کرتی ہے .

مریم نواز کا کہنا تھا کہ ہم نے نہ تو گھر کے کھانے کی درخواست کرنی ہے نہ ہی کوئی گلہ

مریم نواز کے جسمانی ریمانڈ میں ایک بار پھر ہوئی توسیع

مریم نواز کے اثاثے ہوں گے منجمند، نیب نے فیصلہ کر لیا

گھر کا کھانا بند ہونے پر مریم نواز نے کیا کہا؟