fbpx

ارشد شریف کی موت،حقائق جاننے کیلئے جوڈیشل کمیشن بنایا جائے،وزیراعظم کا چیف جسٹس کو خط

ارشد شریف کی موت کے حقائق جاننے کیلئے جوڈیشل کمیشن بنایا جائے، وزیراعظم کا چیف جسٹس کو خط

وزیراعظم شہباز شریف نے چیف جسٹس عمر عطابندیال کو خط لکھا ہے وزیراعظم شہباز شریف نے چیف جسٹس عمر عطا بندیال کو لکھے گئے خط میں صحافی ارشد شریف کے جاں بحق ہونے کےحقائق جاننے کیلئے جوڈیشل کمیشن بنانے کی استدعا کی، خط میں کہا گیا کہ سپریم کورٹ کے تمام دستیاب جج صاحبان پر مشتمل کمیشن بنایا جائے، جوڈیشل کمیشن 5سوالات پر خصوصی غور کر سکتا ہے،ارشد شریف نے اگست 2022 میں بیرون ملک جانے کیلئے کیا طریقہ کار اپنایا، ارشد شریف کی بیرون ملک روانگی میں کس نے سہولت کاری کی؟ ارشد شریف کی جان کو خطرہ کی اطلاع تھی تو اس سے بچاؤ کیلئے کیا اقدامات کئے گئے؟ وہ کیا حالات اور وجوہات تھیں جس کی بنا پر ارشد شریف متحدہ عرب امارات سے کینیا گئے؟فائرنگ کے واقعات کی اصل حقیقت کیا ہے جن میں ارشد شریف کی موت ہوئی؟ کیا ارشد شریف کی موت واقعی غلط شناخت کا معاملہ ہے یا پھر یہ کسی مجرمانہ کھیل کا نتیجہ ہے، ملک میں قانون کی حکمرانی کے لئے کمیشن کی تشکیل ضروری ہے، اس ذمہ داری کی انجام دہی میں وفاقی حکومت کمیشن کو بھرپور تعاون فراہم کرے گی، واقعے کے فوری بعد تجربہ کار افسران پر مشتمل کمیٹی فوری طور پر کینیا بھجوائی گئی،ارشد شریف کی پاکستان سے روانگی سے قبل رابطوں کی تحقیق کرنا ضروری ہے وفاقی حکومت نے لاہور ہائیکورٹ کے ریٹائر جج صاحب پر مشتمل کمیشن بنایا تھا،

ایک بیٹا شہید،خواہش ہے دوسرے کو بھی اللہ شہادت دے،پاک فوج کے شہید جوانوں کے والدین کے تاثرات

شہادت سے سات ماہ پہلے بیٹے کی شاد ی کی تھی،والدہ کیپٹن محمد صبیح ابرار شہید

ارشد شریف کی موت پر وزیراعظم، صدر مملکت کا اظہار افسوس

اسلام آباد ہائیکورٹ کاسیکرٹری داخلہ و خارجہ کو ارشد شریف کے اہلخانہ سے رابطے کا حکم

‏ارشد شریف کو گولی کیسے لگی؟ حقائق سامنے آ گئے

ارشد شریف کی موت،قیاس آرائیوں سے گریز کیا جائے،وفاقی وزیر اطلاعات

 وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب ارشد شریف کی والدہ کے پاس تعزیت کے لئے پہنچ گئیں

جویریہ صدیق نے ٹویٹر پر ارشد شریف کی جانب سے مریم نواز کی والدہ کے لیے دعا کا سکرین شاٹ شیئر کیا اور مریم نواز کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ کچھ شرم کر۔ اللہ سے ڈر

وزیراعظم شہباز شریف نےکلائمیٹ امپلی منٹیشن سمٹ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں سیلاب سے بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی،پاکستان میں سیلاب سے 30ارب ڈالر کانقصان ہوا،سیلاب سے پاکستان میں 40لاکھ ایکٹر پر کھڑی فصلیں تباہ ہوئیں،یہ وقت ہے کہ دنیا ماحولیاتی تبدیلی سے نمٹنے کیلئے اقدامات کرے پاکستان کاکاربن کے اخراج میں حصہ ایک فیصد سے بھی کم ہے،دنیا کو ماحولیاتی انصاف پر توجہ مرکوز کرنا ہوگی،سیلاب متاثرہ علاقوں میں ریلیف اور بحالی کاکام تیزی سے جاری ہے، پاکستان موسمیاتی تبدیلی سے متاثر ممالک میں سرفہرست ہے،سیلابی تباہی اتنے بڑے پیمانے پر ہوئی کہ ہم اکیلے اس سے نمٹ نہیں سکتے،ہمیں آئندہ نسلوں کے محفوظ مستقبل کیلئے اقدامات کرنا ہونگے،حکومت سیلاب متاثرین کی بحالی کیلئے ہر ممکن وسائل استعمال کررہی ہے، سیلاب متاثرین کی بحالی کیلئے عالمی برادری کی زیادہ سے زیادہ معاونت درکار ہے، حکومت سیلاب متاثرین کی بحالی کیلئے ہر ممکن اقدامات کررہی ہے