fbpx

شوکت ترین ، تیمور جھگڑا ،محسن لغاری کی پاکستان کے خلاف سازش بے نقاب،آڈیو سامنے آ گئی

شوکت ترین ، تیمور جھگڑا ،محسن لغاری کی پاکستان کے خلاف سازش بے نقاب،آڈیو سامنے آ گئی
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق تحریک انصاف ملک دشمنی میں سب سے آگے نکل گئی

پاکستان کے خلاف انتہائی گھناؤنی اور مکروہ سازش بے نقاب ہو گئی ہے، شوکت ترین اور وزیر خزانہ پنجاب مُحسن لغاری کی گفتگو لیک ہوئی ہے، شوکت ترین نے محسن لغاری کو کہا کہ یہ جو آئی ایم ایف کو 750 ارب کی کمٹمنٹ دی ہے آپ سب نے سائن کیا ہے، آپ نے اب کہنا ہے کہ ہم نے جو کمٹمنٹ دی تھی وہ سیلاب سے پہلے دی تھی آپ نے اب کہنا ہے کہ اب سیلاب کی وجہ سے ہمیں بہت پیسا خرچ کرنا پڑے گا آپ نے اب یہ لکھنا ہے کہ اب ہم یہ کمٹمنٹ پوری نہیں کرپائیں گے، یہی لکھنا ہے آپ نے اور کچھ نہیں کرنا شوکت ترین کے کہنے پر محسن لغاری نے جی بالکل کہہ کر جواب دیا شوکت ترین نے گفتگو میں مزید کہا کہ ہم سب چاہتے ہیں ان پر دباؤ پڑے، یہ ہمیں اندر کرا رہے ہیں اور ہم پر دہشتگردی کے الزامات لگا رہے ہیں، یہ بالکل اسکاٹ فری جارہے ہیں یہ نہیں ہونے دینا ہے

شوکت ترین کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف کے ساتھ جو معاہدہ پی ٹی آئی حکومت نے کیا ہے اُس سے مُکر جائیں۔ ہ کمٹمنٹ فلڈ سے پہلے دی تھی اب فلڈ پہ ہمیں بہت پیسے خرچ کرنا پڑیں گے۔ اس سے ان سالوں پر پریشر بڑھے گا جو ہمیں اندر کرو رہے اور ہم پر دہشتگردی کے مقدما ت کروا رہے ہیں۔ وزیر خزانہ پنجاب محسن لغاری نے کہا کہ سر اس سے پاکستان کو نقصان ہوگا؟ شوکت ترین کا کہنا تھا کہ یہ تو ضرور ہوگا۔آئی ایم ایف کہے گا کہ یہ پیسے کدھر سے پورے کریں گے؟ وہ ہمیں مس ٹریٹ کر رہے ہونگے اور ہم ان کو۔ محسن لغاری نے کہا کہ سوشل میڈیا سے زیادہ پاور فل ٹول کوئی نہیں ہے۔ شوکت ترین کا کہنا تھا کہ ۔تو ریلیز کرنے کی ضرورت ہی نہیں ہو گی وہ خود ہی سوشل میڈیا پر وائر ل ہو جائے گا۔ تیمور کہہ رہا تھا کہ میں نمبر2 کو بہت اچھا جانتا ہوں تو میں اس کو ویسے ہی لیک کردونگا۔ ایسا نہ نظر آئے کہ ہم ملک کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔

فوج اور قوم کے درمیان خلیج پیدا کرنا ملک دشمن قوتوں کا ایجنڈا ہے،پرویز الہیٰ

سپریم کورٹ نے دیا پی ٹی آئی کو جھٹکا،فواد چودھری کو بولنے سے بھی روک دیا

عمران خان نے کل اداروں کے خلاف زہر اگلا ہے،وزیراعظم

عمران خان کے فوج اور اُس کی قیادت پر انتہائی غلط اور بھونڈے الزامات پر ریٹائرڈ فوجی سامنے آ گئے۔

القادر یونیورسٹی کا زمین پر تاحال کوئی وجود نہیں،خواجہ آصف کا قومی اسمبلی میں انکشاف

سیاسی مفادات کے لئے ملک کونقصان نہیں پہنچانا چاہئے

سافٹ ویئر اپڈیٹ، میں پاک فوج سے معافی مانگتی ہوں،خاتون کا ویڈیو پیغام

تحریک انصاف کے رہنما شوکت ترین اور تیمور جھگڑا کی آڈیو وائرل ہوئی ہیں جس میں ایک لیٹر کے بارے میں بات ہو رہی ہے، شوکت ترین تمور جھگڑا سے پوچھتے ہیں کہ آپ نے وہ خط بنا لیا، جس پر تیمور نے کہا کہ میں ابھی بناتا ہوں میں راستے میں ہوں ابھی بنا کر بھیجتا ہوں شوکت ترین کا کہنا تھا کہ اس لیٹر سے ہمیں بہت فائدہ پہنچنے والا ہے، پورے خیبر پختونخواہ کا بیڑا غرق کر دیا ہے میں نے لغاری کو بھی کہہ دیا ہے پہلا پوائنٹ آپ نے بنا لینا ہے دوسرے آپ نے بنائے ہوئے ہیں، ہمیں بہت پیسے چاہئے، پیسے خرچنے ہوں گے، تیمور کا کہنا ہے کہ میں نے تو نہیں چھوڑنے، پتہ نہیں لغاری نے چھوڑنے ہیں یا نہیں شوکت ترین نے کہا کہ لیکن آج ہم نے کرنا یہ ہے کہ آج یہ خط لکھ کے اور جو آئی ایم والی ایشٹرس ہے اسکو کاپی بھیج دیں گے تا کہ یہ پتہ تو چلے ….شوکت ترین یہاں آڈیو میں گالی دیتے ہیں

تیمور کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف نمبر ٹو جو یہاں پر ہے اسکو بھیجتا رہا ہوں، مجھے محسن نے بھی فون کیا تھا، خان صاحب اور محمود خان کل کی میٹنگ میں کچھ ڈسکس ہوا تھا لیکن پریس کانفرنس نہیں ہوئی، جس کے بعد ترین اک کہنا تھا کہ اس ہر سیمنار کریں گے، اگر پریس کانفرنس کرنی ہے تو وہ بھی تینوں بیٹھ کر کر لیں گے

تحریک انصاف کی ملک دشمنی کا اس کے علاوہ اور کیا ثبوت چاہئے ؟ تحریک انصاف کے رہنماؤں کی آڈیو لیک ہونے پر مبشر لقمان کا رد عمل
تحریک انصاف کے رہنماؤں شوکت ترین، محسن لغاری، تیمور جھگڑا کی آڈیو وائرل ہونے پر سینئر صحافی و اینکر پرسن مبشر لقمان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کی ہے اور کہا ہے کہ دو دھماکہ خیزآڈیو سامنے آئی ہیں جو اس بات کو ثابت کرتی ہیں کہ تحریک انصاف ہر قیمت پر اقتدار چاہتی ہے، شوکت ترین محسن لغاری اور تیمور جھگڑا کی سامنے آنی والی آڈیو لیک نے ثابت کر دیا ہے کہ پی ٹی آئی ریاست مخالف ایجنڈے پر کام کر رہی ہے، یہ آڈیو لیکس سن کر یقین نہیں آتا کہ تحریک انصاف کی قیادت پاکستان مخالف ہو سکتی ہے،تحریک انصاف کی ملک دشمنی کا اس کے علاوہ اور کیا ثبوت چاہئے سمجھ میں نہیں آتا

علاوہ ازیں وزیر خزانہ خیبر پختونخوا تیمور سلیم جھگڑا کا آڈیو لیک ہونے کے بعد رد عمل سامنے آیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ فاٹا کے انضمام کے بعد سے یہ سلسلہ شروع ہوا ،فاٹا میں دہشت گردی کے خاتمے کے لیے پیسے خرچ کرنے پڑے، قبائلی اضلاع ملے تو کوشش کی کہ بہتر اندازمیں معاملات حل کریں،فاٹا کے لوگ 20 سال سے جنگ میں تھے ، انفراسٹرکچر بنانا تھا، ہم نے مفتاح اسماعیل اور وزیر اعظم سے ملاقات کی اور فاٹا اخراجات پر بات کی ،ہماری وفاداری پر سوالات اٹھائے جارہے ہیں فاٹا والوں کے حقوق کے لیے کام کرنا ہوگا،مفتاح اسماعیل کا مشکور ہوں انہوں نے فاٹا سے متعلق تعاون کا یقین دلایا ،ہمیں فاٹا کے لیے مل کر چلنا ہوگا،خط میں نے ہی لکھا تھا،جس میں قبائلی اضلاع کے مسائل حل کرنے کی بات کی خط میں میرا وفاق سے مطالبہ تھا کہ این ایف سی کا اجلاس بلایا جائے خط میں نہیں لکھا کہ آئی ایم ایف ڈیل سے پیچھے ہٹیں گے 5جولائی کو میٹنگ کی، 3 لائن کا خط دیا،