کراچی میں ڈاکوؤں نے لوٹ مار کے دوران ایک شہری کو قتل کر دیا،

0
41

کراچی میں ڈاکوؤں نے لوٹ مار کے دوران ایک شہری کو قتل کر دیا:

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کراچی کے علاقے ناظم آباد میں جرم کی ایک واردات سامنے آئی ہے۔

مزید تفصیلات سے آگاہ کیا جاتا ہے کہ کراچی کے علاقے ناظم آباد بورڈ آفس کے قریب دو ڈاکوؤں نے فائرنگ کی اس فائرنگ سے ایک شہری جس کا نام احمد ریاض تھا۔اس کے قتل کا مقدمہ پاپوش نگر تھانے میں درج کیا گیا۔ تفصیلات سے پتا چلتا ہے کہ احمد ریاض ہوٹل پر چاۓ اور کولڈ ڈرنک فروخت کرتا تھا۔ اور اس کی عمر چالیس سال تھی۔

مزید برآں یہ کہ کراچی میں بہت زیادہ گرمی پڑ رہی ہے۔ اور آجکل تو کراچی میں سمندر کی طرف سے آنے والی ٹھنڈی ہوائیں بھی بند ہو چکی ہیں۔ جس کی وجہ سے بہت زیادہ گرمی ہے۔ یہ چالیس سالہ احمد ریاض جب اپنی دکان پر کام کرتا تھا تو یہ قمیض اتار کر کام کر رہا تھا۔ یہ اپنے کام کرنے میں مصروف تھا کہ اچانک سے دو ڈاکو آۓ اور انہوں نے لوٹ مار شروع کر دی۔اب ڈاکوؤں نے لوٹ مار کر لی تھی۔

لیکن جاتے ہوۓ ڈاکوؤں نے ایک انتہائی نا زیبا حرکت کی۔ ڈاکوؤں نے جاتے ہوۓ احمد ریاض نے جو قمیض اتاری ہوئی تھی۔ کام کرنے کے دوران ڈاکو اس کی قمیض لے کر جانے ہی لگے کہ احمد ریاض نے اس پر غصے کا اظہار کیا اور ڈاکوؤں اور احمد ریاض کی آپس میں لڑائی ہو گئی۔ اسی لڑائی کی وجہ سے ڈاکوؤں نے طیش میں آ کر احمد ریاض کو گولی مار دی۔ جو کہ اس کے سینے میں جا لگی۔ اور اس کے بعد فوری طور پر ڈاکو فرار ہو گے۔

جب مقتول کے گھر والوں سے اس حوالے سے پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ چچا 6 بجے کے قریب دکان پر تھے۔ جب ہمیں اس حادثے کے بارے میں پتا چلا تھا۔ اور ان کا کہنا تھا کہ وہاں پر موجود لوگوں نے لاش کو عباسی ہسپتال منتقل کیا گیا۔ مزید یہ کہ مقتول کے گھر والوں نے ان ڈاکوؤں کو فوری طور پر پکڑنے اور سزا دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

Leave a reply