مقدمہ کے اخراج کیلئے شیخ رشید کی درخواست سماعت کیلئے منظور

0
47
sheikh rasheed in jail

لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بنچ نے مری میں درج مقدمہ کے اخراج کیلئے شیخ رشید کی درخواست سماعت کیلئے منظور کرلی

عدالت نے تھانہ مری میں درج مقدمے کا ریکارڈ طلب کرلیا عدالت نے کیس کی سماعت 2 ہفتے تک ملتوی کردی عدالت نے ایس ایچ اور تھانہ مری اور تفتیشی افسر کو آئندہ سماعت پر پیش ہونے کی ہدایت کردی

دوسری جانب سیشن کورٹ اسلام آباد میں شیخ رشید کی ضمانت بعد از گرفتاری کی درخواست پر سماعت ہوئی سیشن جج نے شیخ رشید کی درخواست ضمانت ایڈیشنل سیشن جج کو بھجوا دی جج طاہر عباس سپرا شیخ رشید کی درخواست ضمانت پر کل سماعت کریں گے، شیخ رشید کی جانب سے دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ پولیس کی معاونت سے پراسیکیوشن نے شیخ رشید پر الزامات لگائے ہائیکورٹ کی جانب سے نوٹس معطل ہونے کے باوجومقدمہ درج کیا گیا، عدالت شیخ رشید کی درخواست ضمانت منظور کرے،

شیخ رشید کے گھر بچے موجود تھے؟ ترجمان اسلام آباد پولیس کا ردعمل

ہ شیخ رشید 73 سال کے ہیں کئی بیماریوں میں مبتلا 

 شیخ رشید کے خلاف کراچی میں بھی مقدمہ درج

سیاسی مفادات کے لئے ملک کونقصان نہیں پہنچانا چاہئے

سافٹ ویئر اپڈیٹ، میں پاک فوج سے معافی مانگتی ہوں،خاتون کا ویڈیو پیغام

عمران خان نے ووٹ مانگنے کیلئے ایک صاحب کو بھیجا تھا،مرزا مسرور کی ویڈیو پر تحریک انصاف خاموش

جس میں وہ کرسی پر بیٹھے ہیں اور سگار پی رہے ہیں، شیخ رشید احمد کو لاک اپ میں بندنہیں کیا

 15 کلو ہیروئن نہیں ڈالی گئی

دوسری جانب عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشیدد نے اپنے خلاف مری میں درج مقدمے کے اخراج کے لیے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا ہے، شیخ رشید احمد نے وکیل سردار عبدالرازق خان کی وساطت سے لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بنچ میں مقدمے کے اخراج کی درخواست دائر کی درخواست میں آئی جی پنجاب، آر پی او، سی پی او راولپنڈی اور ایس ایچ او تھانہ مری کو فریق بنایا گیا ہے ،درخواست گزار کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ یکم اور دو فروری کی درمیانی شب ساڑھے 12 بجے 150 کے قریب پولیس اہلکاروں نے گھر پر دھاوا بولا، پولیس بغیر کسی وارنٹ کے گھر میں زبردستی داخل ہوئی اور شیخ رشید کو گرفتار کیا، پولیس اہلکاروں کی جانب سے شیخ رشید کے ملازموں پر تشدد بھی کیا گیا، پولیس نے نقدی، موبائل فون، قیمتی گھڑیاں، لائسنسی اسلحہ اور دیگر قیمتی اشیاء لوٹ لیں۔ لپولیس کی جانب سے اپنے اہلکاروں کیخلاف ڈکیتی کا مقدمہ درج کرنے کے بجائے شیخ رشید کیخلاف ہی ایف آئی آر دے دی گئی، مری میں درج کی گئی ایف آئی آر بدنیتی پر مبنی اور پولیس کی جانب سے اختیارات کا تجاوز ہے، مری میں درج مقدمہ آئین میں درج بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ مری میں درج کی گئی ایف آئی آر کو غیر قانونی قرار دے کر مقدمہ خارج کرنے کا حکم دے

Leave a reply