ٹرمپ پھرآیا:سپریم کورٹ نے ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف پورن اسٹار کا کیس ختم کرکے واپسی کا راستہ ہموارکردیا

0
55

واشنگٹن :ٹرمپ پھرآیا:امریکی عدالت نے ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف پورن اسٹار کا کیس ختم کرکے واپسی کا راستہ ہموارکردیا،اطلاعات کے مطابق امریکی سپریم کورٹ نے سابق پورن اسٹار کی جانب سے سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف دائر کردہ ہرجانے کے کیس کی درخواست کو مسترد کرتے ہوئے کیس کو ہی ختم کردیا۔

سابق پورن اسٹار اسٹارمے ڈینیئلز المعروف اسٹیفنی کلیفورڈ نے 2019 میں امریکی ریاست ٹیکساس کی سپریم کورٹ میں ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا۔

اسٹیفنی کلیفورڈ نے اپنے ہرجانے میں دعویٰ کیا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے ان کے ساتھ جنسی تعلقات رہے ہیں اور انہوں نے اداکارہ کو 2016 کے انتخابات سے ایک ماہ قبل جنسی تعلقات کے معاملے پر خاموش رہنے کے لیے ایک لاکھ 30 ہزار ڈالر کی رقم بھی ادا کی تھی۔

اداکارہ نے درخواست میں کہا تھا کہ تاہم بعد ازاں انہیں جنسی تعلقات کے حوالے سے بات کرنے پر دھمکایا گیا اور ان کی عزت نفس کو ٹھیس پہنچائی گئی۔

سابق پورن اسٹار نے ہرجانے کے دعوے میں عدالت سے درخواست کی تھی ڈونلڈ ٹرمپ سے ہرجانے کی رقم دلوائی جائے، یہ واضح نہیں تھا کہ اداکارہ نے کتنے ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا۔

تاہم امریکی سپریم کورٹ نے 22 فروری 2021 کو اسٹیفنی کلیفورڈ کی درخواست کو نامکمل اور دیگر وجوہات کی وجہ سے مسترد کرتے ہوئے کیس کو ختم کردیا۔

خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس (اے پی) کے مطابق سپریم کورٹ نے اپنے مختصر کیس میں سابق پورن اسٹار کی درخواست کو مسترد کرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف دائر کیا گیا کیس ختم کردیا۔

Leave a reply