مصنوعی میٹھا ڈی این اے کیلئے انتہائی خطرناک قرار

0
34
Sweetner

ایک عالمی تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ مصنوعی میٹھا انسانی ڈی این اے کیلئے انتہائی خطرناک ہے جبکہ اگر آپ کو اس بات پر فخر ہے کہ آپ نے چینی کی مقدار کو کم کرنے کے لیے کوئی تدبیر اپنائی ہے تو یہ صحت مند عادت ہے لیکن دی ہیلدی کی ایک رپورٹ کے مطابق چینی کا مصنوعی متبادل آپ کے لیے اچھا نہیں ہو سکتا اور ناہی وزن میں اضافے کو روکنے میں کوئی مددگار ثابت ہوسکتا کیونکہ سائنس کے ایک نئے مطالعے سے معلوم ہوا ہے کہ ایک مقبول کم کیلوری والا مصنوئی میٹھا کو آپ کی حیاتیات پر بہت برا اثر ڈال سکتا ہے اور صحت کیلئے بہت ہی نقصان دہ ہے.

واضح رہے کہ مئی 2023 کی نارتھ کیرولائنا اسٹیٹ یونیورسٹی اور یونیورسٹی آف نارتھ کیرولینا میں چیپل ہل کے جریدے میں شائع ہونے والی ایک تحقیق، پارٹ بی نے انکشاف کیا کہ سوکرالوز کو ہضم کرنا "جینوٹکسک” اثر کا باعث بن سکتا ہے جبکہ جینوٹوکسک ایک اصطلاح ہے جو اس بات کی نشاندہی کرتی ہے کہ یہ ڈی این اے کی ساخت میں خلل ڈالتی ہے اور یہ مرکب صرف ایک ضمنی پیداوار نہیں ہے
مزید یہ بھی پڑھیں؛
خدیجہ شاہ، صنم جاوید و دیگر کی درخواست ضمانت پر آیا فیصلہ
ہولی تہوار سے متعلق ایچ ای سی کا نوٹیفکیشن غیر قانونی قرار
بچوں کیلئےفارمولا ملک پربھاری ٹیکس لگایا جانا چاہیئے،ماہرین صحت
جعلی افغان پاسپورٹ کے ذریعے اٹلی جانے والا مسافر گرفتار
رابعہ سلطان جناح ہاوس پر حملہ کی تفتیش میں پولیس کو مطلوب تھیں,پنجاب حکومت
ہتک عزت دعویٰ: خواتین عوامی طور پر جنسی ہراسانی سنگین جیسے جھوٹے الزامات لگا سکتی ہیں،میشا شفیع
سربراہی اجلاس میں دعوت دینے اور پرتپاک میزبانی پروزیراعظم کا فرانسیسی صدر کا شکریہ

تاہم خیال رہے کہ سپلینڈا ایک برانڈ کا نام ہے جبکہ اس کے علاوہ کچھ عام سوکرالوز برانڈز بھی پیلے رنگ کی پیکنگ میں آتے ہیں جو دراصل اس برانڈ کو کاپی کرتے ہیں یا خود سپلینڈا کہلواتے ہیں، جبکہ ان مصنوعات میں زیر بحث کیمیکل sucralose-6-acetate ہے، ایک چکنائی میں گھلنشیل مرکب جو sucralose کھانے کے بعد گٹ میں پیدا ہوتا ہے۔ اسی تحقیقی ٹیم کے پچھلے کام نے ثابت کیا کہ گٹ میں ایسے کئی مرکبات بنتے ہیں، لیکن sucralose-6-acetate کی دریافت نمایاں ہے۔

Leave a reply