آئینی اداروں پر بد نیتی کا الزام لگا کر تباہ نہ کریں،چیف جسٹس

0
217
Supreme Court

پرویزمشرف کی سیاسی جماعت آل پاکستان مسلم لیگ کا انتخابی نشان واپس لینے کی درخواست پر سماعت ہوئی

چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے آل پاکستان مسلم لیگ کیس کی سماعت کی، چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے کہا کہ آل پاکستان مسلم لیگ نے اکاونٹس کی تفصیل نہیں دی اس لیے جماعت ڈی لسٹ کی گئی، جسٹس مسرت ہلالی نے استفسار کیا کہ کیا آل پاکستان مسلم لیگ نے انٹرا پارٹی انتخابات کرائے،

وکیل آل پاکستان مسلم لیگ نے کہا کہ الیکشن کمیشن نے بدنیتی دکھائی،دوران سماعت چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آئینی اداروں پر بد نیتی کا الزام لگا کر تباہ نہ کریں بتائیں الیکشن کمیشن کے آرڈر میں غلطی کیا ہے بس بد نیتی کا الزام لگا دیا بس۔،دکھائیں کیا غلطی ہے الیکشن کمیشن کے فیصلہ میں،پاکستان میں ایک عادت ہو گئی ہے کہ ہر آدمی کو ڈس کریڈٹ کرو اُس پر الزام لگا دو،

اے پی ایم ایل کے وکیل نے ماسک ناک کے نیچے پہن کر دلائل دینے کی کوشش کی، چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے وکیل سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ میں آپ کو سن نہیں پا رہا، یا آپ ماسک پہنیں یا اتار دیں،سانس تو ناک سے بھی اندر جا رہی ہے،منہ کور کرنے کا تو کوئی فائدہ نہیں ہوگا،وکیل نے ماسک اتار کر جیب میں ڈال لیا.

پشاور پولیس کا رویہ… خواجہ سرا پشاور چھوڑنے لگے

شہر قائد خواجہ سراؤں کے لئے غیر محفوظ

خواجہ سراؤں پر تشدد کی رپورٹنگ کیلئے موبائل ایپ تیار

ہ ٹرانسجینڈر قانون سے معاشرے میں خواجہ سرا افراد کو بنیادی حقوق ملے۔

 پاکستان میں 2018 سے قبل ٹرانسجینڈر قانون نہیں تھا،

Leave a reply