جناح ہاؤس جلاؤ گھیراؤ سمیت دیگر سات مقدمات میں عمران خان کی عبوری ضمانت خارج

0
28
Imran Khan

انسداد دہشت گردی عدالت نے عمران خان کی جناح ہاؤس جلاؤ گھیراؤ سمیت دیگر سات مقدمات میں عبوری ضمانت خارج کر دی،انسداد دہشتگری عدالت نے عدم پیشی پر چیرمین تحریک انصاف کی ضمانتیں خارج کیں

نو مئی کو جناح ہاؤس جلاؤ گھیراؤ سمیت دیگر مقدمات میں عبوری ضمانتوں میں حاضری معافی کی درخواست پر سماعت انسداد دہشت گردی عدالت کے جج اعجاز احمد بٹر نے کی،دوران سماعت اسپیشل پراسیکیوٹر فرہاد علی شاہ نے سرکار کی طرف سے جب کہ چیئرمین پی ٹی آئی کی جانب سے بیرسٹر سلمان صفدر نے دلائل دیئے،دوران سماعت چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل نے حاضری معافی کی درخواست پر دلائل کے لیے مہلت مانگتے ہوئے کہا کہ عدالت سے چاہوں گا کہ مزید ریکارڈ اکٹھے کرنے کی مہلت دی جائے تا کہ بہتر انداز میں دلائل دے سکوں اگر آپ پھر بھی کہیں کہ دلائل دو، تو میں موجود ریکارڈ کے مطابق دلائل دے دوں گا، عدالت نے کہا کہ ہم چاہیں گے کہ آپ دلائل دیں،وکیل سلمان صفدر نے کہا کہ سپریم کورٹ نے بھی چیئرمین مین پی ٹی آئی کو کوئٹہ کیس میں 24 اگست تک گرفتار نہ کرنے کا حکم دیا ہے،سرکاری وکیل سے کہوں گا کہ میرے ساتھ پورے 50 اوور کا میچ کھلیں۔ وائٹ واش یا پھر بارش کی وجہ سے جیت کا کپ نہ اٹھائیں۔ چیئرمین پی ٹی آئی تو عدالت پیش ہونا چاہتے ہیں، آپ پروڈکشن آرڈر جاری کردیں آج میری ٹیم بھی پوری نہیں ہے ،

اسپیشل پراسیکیوٹر فرہاد علی شاہ نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ قانون کے خلاف تو عدالت فائدہ نہیں دے سکتی عدم پیروی پر اگر ضمانت خارج ہوتی ہے تو وہ درست ہے جب ایک ملزم سزا یافتہ ہے تو پھر ضمانت کیسے چل سکتی ہے مفروضے پر بات نہیں کی جا سکتی قانون کے خلاف کوئی فیصلہ نہیں کیا جا سکتا سزا یافتہ ملزم کو کیسے عدالت میں عبوری ضمانت پر بلایا جا سکتا ہے۔ اس اسٹیج پر عدالت پہلے ہی موقع دے چکی ہےعدم پیروی ملزم کی ضمانتیں خارج کی جائیں،

نومئی کو عمران خان کی گرفتاری کے بعد پی ٹی آئی کارکنان نے فوجی تنصیبات پر ملک بھر میں حملے کئے تھے، شرپسند عناصر کو گرفتار کیا جا چکا ہے، گرفتار افراد کا کہنا ہے منظم منصوبہ بندی کے تحت حملے کئے گئے، شرپسند افراد نے ویڈیو بیان بھی جاری کئے ہیں جس میں انہوں نے اعتراف کیا کہ یہ سب منصوبہ بندی کے تحت ہوا، پی ٹی آئی رہنما بھی گرفتار ہیں تو اس واقعہ کے بعد کئی رہنما پارٹی چھوڑ چکے ہیں

عمران خان کے خلاف بھی نومئی کے واقعات پر مقدمے درج کئے گئے تھے، عمران خان انسداد دہشت گردی عدالت میں پیش ہوتے رہے، اب عمران خان کو توشہ خانہ کیس میں سزا ہو چکی ہے اور وہ جیل میں ہیں، گزشتہ روز توشہ خانہ نیب کیس، اورالقادر ٹرسٹ کیس میں بھی عمران خان کی ضمانت خارج ہو چکی ہے

عمران خان کو اگر سزا کے خلاف اپیل میں رہائی کا حکم ملتا ہے تو باقی مقدمات میں عمران خان کو گرفتار کر لیا جائے گا،

عمران خان کی گرفتاری کے بعد کور کمانڈر ہاؤس لاہور میں ہونیوالے ہنگامہ آرائی میں پی ٹی آئی ملوث نکلی

 بشریٰ بی بی کی گرفتاری کے بھی امکانات

نواز شریف کو سزا سنانے والے جج محمد بشیر کی عدالت میں عمران خان کی پیشی 

 مراد سعید کے گھر پر پولیس نے چھاپہ

Leave a reply