یورپ اور انڈیا ترک ڈرامےدیریلیش ارطغرل کی مخالفت میں کھل کر سامنے آ گیا

0
53

گزشتہ 60 ،70 سال سے مسلمانوں کو فحش فلمیں اور جھوٹے ڈرامے مصنوعی پھولوں میں سجا کر پیش کرنے والا یورپ اور انڈیا ترکی ڈرامہ غازی ارطغل کی مخالفت میں کھل کر سامنے آگیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ 60 ،70 سال سے مسلمانوں کو فحش فلمیں اور جھوٹے ڈرامے مصنوعی پھولوں میں سجا کر پیش کرنے والا یورپ اور انڈیا ترکی ڈرامہ غازی ارطغل کی مخالفت میں کھل کر سامنے آگیا جبکہ امریکہ کی لونڈی ہالی وڈ اور بالی وڈ کی 70 سالہ فحش فلم انڈسٹری کو ترکی کے معروف ڈرامہ غازی ارطغل نے صرف دو سال میں دفن کر دیا

جس کا واضع ثبوت یہ ہے کہ انڈین حکومت نے اپنے اداکاروں پر پابندی لگاٸی کہ تم ترکی ڈرامہ غازی ارطغل کی اردو زبان میں ڈبنگ نہیں کرو گے جس کے بعد پاکستانی اداکاروں نے غازی ارطغل کے سیزن ون کی ڈبنگ کی ہے

ترکی نے تاریخی ڈرامہ غازی ارطغل میں مسلمانوں کے اسلامی جذبے اور جوش کو دکھایا گیا ہے مذکورہ ڈرامہ بنا کر مسلمانوں کو نہ صرف اپنی طرف متوجہ کیا بلکہ پوری دنیا کے مسلمانوں کو یکجا کر دیا ہے جو کہ اسلام اور مسلمانوں کے دشمن انڈیا اور یورپ کو ایک آنکھ نہیں بھایا اور وہ اس ڈرامے کی وجہ سے مسلمانوں کی یکجہتی سے خوفزدہ ہیں یہی وجہ ہے کہ انڈین حکومت نے اس ڈرامے کی ڈبنگ پر پابندی لگا دی ہے

اس وقت غازی ارطغل اور غازی عثمان ڈرامہ 150 سے زیادہ ممالک میں میں ترجمہ کے ساتھ نشر ہو رہا ہے جوکہ دنیا میں سب سے ‏زیادہ دیکھا جانے والا ڈرامہ ہے

ترکی ڈرامہ غازی ارطغل نے نوجوانوں کو اپنا کھویا ہوا مقام (خلافت عثمانیہ ) حاصل کرنے کے لئے پرجوش کر دیا ہے امریکی اخبار نیو یارک ٹاٸمز اور واشنگٹن پوسٹ نے اس ڈرامے کو خاموش ایٹم بم کہا ہے

واضح رہے اس ڈرامے میں اپنی اسلامی تاریخ اپنی نسل کو بتا کر اور عالم کفر کے خلاف یکجا ہونے کا پیغام دیا گیا ہے

ترکی ڈرامے دیریلیش ارطغرل کی اردو ڈبنگ روکنے کا انکشاف

Leave a reply