بھارتی فوج مجاہدین کی قبروں سے بھی ڈرنے لگی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق بھارتی فوج مجاہدین کی قبروں سے بھی ڈرنے لگی

مزاحمتی قائد کے مزار پر لوگوں کی آمد روکنے کے لئے بھارتی اسٹیبلشمنٹ اعلی مزاحمتی رہنما ، ریاض نائیکو کی لاش کو سونامرگ سے نامعلوم مقام پر منتقل کررہی ہے۔

کشمیری کمانڈ ریاض نائیکو کو 6 مئی 2020کو بھارتی فورسز نے شہید کردیا تھا اور ان کی لاش اہل خانہ کے حوالے نہیں کی گئی تھی تا یم حکام نے انہیں سونامرگ میں واقع ان کے آبائی شہر سے بہت دور دفن کردیا تھا

بھارتی جارحیت خطے کے امن وسلامتی کوتباہ کرسکتی ہے، وزیراعظم کا دنیا کو انتباہ

کشمیریوں کے ساتھ کھڑے تھے ،ہیں اور رہیں گے، پاک فوج کا کشمیریوں‌ کو پیغام

‏اسرائیل کو تسلیم کرنے سے متعلق باتیں پروپیگنڈا ہے. ڈی جی آئی ایس پی آر

یہ سوچ بھی کیسے سکتے ہیں کہ کشمیر پر کسی قسم کی کوئی ڈیل ہوئی، ڈی جی آئی ایس پی آر

مغربی اور مشرقی سرحد پر فوج مستعد ،قوم کا دفاع ہر صورت کریں گے، ترجمان پاک فوج

بھارتی فوج نے ریاض نائیکو کی لاش کو اسلئے نا معلوم مقام پر دفن کیا تا کہ کشمیری شہید مجاہد کی قبر پر نہ جا سکیں، بھارتی فوج کشمیری مجاہدین کی قبروں سے بھی خوفزدہ ہو چکی ہے

واضح رہے کہ گ بھارتی فوج نے حزب المجاہدین کے کمانڈر ریاض نائیکو کو انکے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ شہید کر دیا تھا، کشمیری حریت رہنماؤں محمد اشرف، عمر عادل ڈار، یاسمین راجہ، محمد یوسف نقاش، مسلم لیگ، پیپلز لیگ، طلبہ سمیت دیگر بڑی تعداد نے شہید ہونے والے کشمیری حریت پسندوں ریاض نائیکو اور عادل احمد کو بھی خراج تحسین پیش کیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.