fbpx

جماعت اسلامی کی سندھ ہائی کورٹ میں‌درخواست،الیکشن سے فرار نہیں ہونے دیں گے:حافظ نعیم

کراچی :کراچی میں ہونے والے بلدیاتی انتخابات کے‌حوالے سے جماعت اسلامی نے اپنا ردعمل پھر دے دیا ہے اور اس سلسلے میں امیرجماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم نےجلد بلدیاتی انتخابات کیلئےسندھ ہائیکورٹ میں درخواست دائرکردی ہے۔

کراچی میں بلدیاتی انتخابات کے‌حوالے سے جمعہ کو ہائیکورٹ کے باہر صحافیوں سے بات کرتےہوئےحافظ نعیم الرحمان نے کہا کہ حکومتی اور دیگر جماعتوں کو الیکشن سے فرار نہیں ہونے دیں گے۔ انھوں نے مطالبہ کیا کہ الیکشن کمیشن نئےبیلٹ پیپرزچھاپے۔

سندھ میں توانائی کے بحران کے متعلق بات کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی نے کہاکہ صورت حال بہت خراب ہے اور کراچی کے لوگ اپنا سب کچھ لٹا کے بھی کچھ نہیں پا رہے ، کےالیکٹرک سے متعلق حافظ نعیم کا کہنا تھا کہ کےالیکٹرک بغیرمعاہدے کےگیس لینے کیلئے اچانک لوڈشیڈنگ بڑھا کرعوام کو تنگ کرنا شروع کردیتی ہے۔

انھوں نے کہا کہ اچانک لوڈشیڈنگ بڑھنےکامقصدکےالیکٹرک کوفائدہ پہنچاناہے اور وفاق،صوبہ مل کرکےالیکٹرک کوفائدہ پہنچاتا ہے۔

کراچی میں بلدیاتی انتخابات 28 اگست کو ہونگے۔ اس سے قبل بلدیاتی انتخابات پچھلے ماہ ہونے تھے تاہم خراب موسم کی وجہ سے ان کو ملتوی کردیا گیا۔یاد رہے کہ کل ایک پیغام میں امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے کہا تھا کہ بہت جلد کراچی کے عوام جماعت اسلامی کو خدمت کا موقع دیں اور پھر کراچی کے میئر کی سیٹ بھی جماعت اسلامی کے حصے میں آئے گی پھر کراچی کے مسائل کو حل کرکے دکھائیں گے