مقبوضہ کشمر،بھارتی فوج نے کشمیریوں کے گھر جلا ڈالے، دو کشمیری شہید

 

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مقبوضہ جموں و کشمیر کے ضلع بڈگام میں گزشتہ شام بھارتی فورسز اور حریت پسندوں کے مابین تصادم میں دو حریت پسند شہید ہوگئے۔

مانچھوا کے آری باغ میں کل شام بھارتی فورسز نے محاصرہ کیا اور بعد میں گھر گھر تلاشی کارروائی شروع کی۔ جیسے ہی فوج اس جگہ کے قریب پہنچی تو تصادم شروع گیا۔جس میں جیش محمد سے تعلق رکھنے والے دو حریت پسند شہید ہو گئے۔ اس کارروائی میں بڈگام پولیس کے علاوہ 50 آر آر، سی آر پی ایف، ایس او جی بڈگام اور سرینگر پولیس شامل ہے۔ بھارتی فوج نے کاروائی کے دوران کشمیریوں کے گھروں کو آگ لگا دی

این آئی اے نے بدھ کی صبح گریٹر کشمیر کے دفتر کے علاوہ انسانی حقوق کے کارکن خرم پرویز کے گھر پر چھاپے مارے۔

وزیراعظم نے مظلوموں کا مقدمہ دنیا کے سب سے بڑے فورم پررکھ دیا،فردوس عاشق اعوان

کشمیر پر بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ بڑی کامیابی ہے، وزیر خارجہ

مقبوضہ کشمیر،کشمیری سڑکوں‌ پر،عمران خان زندہ باد کے نعرے، کہا اللہ کے بعدعمران خان پر بھروسہ

پاکستان کا ہر جوان تحریک کشمیر کا ترجمان ہے،ورلڈ کالمسٹ کلب کے زیر اہتمام یکجہتی کشمیر سیمینار سے میاں اسلم اقبال کا خطاب

ساوتھ ایشین وائر کے مطابق گریٹر کشمیر کے دفترذرائع کا کہنا ہے کہ پرتاپ پارک میں گریٹر کشمیر کا دفتر، سوناور میں انسانی حقوق کے کارکن خرم پرویز کے مکان، نہرو پارک کے قریب محمد امین ڈنگولا سے تعلق رکھنے والا ہاس بوٹ اور نوا کدال میں این جی اتھروٹ کے دفتر پر این آئی اے کی ٹیم پہنچی اور ان جگہوں پر تلاشی لی۔ تاہم این آئی اے کی اس تازہ کارروائی کی وجہ فوری طور پر معلوم نہیں ہو سکی ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.