موٹروے زیادتی کیس،دو ملزمان کی سزائے موت کیخلاف اپیل پر دلائل طلب

0
180
motorway rape case

لاہور ہائیکورٹ میں موٹروے زیادتی کیس میں دو ملزمان کی سزائے موت کیخلاف اپیل پر سماعت ہوئی۔

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شہرام سرور اور جسٹس علی ضیاء باجوہ پر مشتمل دو رکنی بنچ نے کیس پر سماعت کی۔ عدالت نے وکلاء سے حتمی دلائل طلب کر لیے، ملزم عابد حسین ملہی اور شفقت بگا نے اپنی سزائے موت کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا،سماعت کے دوران سرکاری وکیل پیش نہیں ہوئے،

پولیس نے ملزموں کے خلاف 9 ستمبر 2020 کو مقدمہ درج کیا تھا،انسدادِ دہشت گردی کی عدالت نے دونوں ملزموں کو خاتون کی بے حرمتی کے جرم میں سزائے موت کا حکم سنایا تھا۔ اپیل میں سزائے موت کالعدم قرار دینے کی استدعا کی گئی ہے.

20 مارچ 2021 کو انسداد دہشتگردی عدالت کے جج نےموٹروے کیس کا فیصلہ سنایا تھاعدالت نے ملزمان کو سزائے موت سنائی ،عدالت نےعابد ملہی اورشفقت بگا کوسزائے موت سنا دی ،انسداد دہشتگردی عدالت کے ایڈمن جج ارشد حسین نے فیصلہ لکھوایا تھا،ملزم عابدملہی اورشفقت بگاکو376/2 کے تحت سزائےموت سنائی گئی دونوں ملزمان کودفعہ365اےمیں عمرقیدکی سزاسنائی گئی ، دونوں ملزمان کودفعہ392میں 14،14سال قیدکی سزاسنائی گئی دونوں ملزمان کو دفعہ 440 کے تحت 5،5سال قیدکی سزاسنائی گئی.

طلبا کے ساتھ زیادتی کرنے، ویڈیو بنا کر بلیک میل کرنے والے سابق پولیس اہلکار کو عدالت نے سنائی سزا

لاہور میں 2 بچیوں کے اغوا کی کوشش ناکام،ملزم گرفتار

پولیس ناکے پر 100روپے کے تنازعے پر دو پولیس اہلکار آپس میں لڑ پڑے

موٹروے کے قریب خاتون سے مبینہ زیادتی ،پولیس کی 20 ٹیمیں تحقیقات میں مصروف

‏موٹروے پر اجتماعی زیادتی کا سن کر دل دہل گیا ، ملوث تمام افراد کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے ، مریم نواز

موٹر وے کے قریب خاتون سے اجتماعی زیادتی،سراج الحق کا ملزمان کی گرفتاری کیلئے 48 گھنٹوں کا الٹی میٹم

درندہ صفت مجرمان کو پھانسی کی سزا دی جائے۔ دردانہ صدیقی

موٹروے زیادتی کیس،سی سی پی او کے بیان پر کابینہ کو معافی مانگنی چاہئے تھی،عدالت،ریکارڈ طلب

موٹرے پر سفر ذرا احتیاط سے، سینیٹر کی گاڑی پر حملہ،پولیس کا روایتی بیان،ملزم فرار

ریپ کے مجرموں کو نامرد بنانے کی بجائے کونسی سزا دینی چاہئے؟ انصار عباسی کی تجویز

بچوں سے زیادتی کے مجرموں کوسرعام سزائے موت ،علامہ ساجد میر نے ایسی بات کہہ دی کہ سب حیران

موٹروے زیادتی کیس،گجرپورہ سے تفتیش تبدیل ،مرکزی ملزم کا شناختی کارڈ بلاک

واضح رہے کہ  لاہور کے علاقے گجر پورہ میں موٹر وے پر خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کا انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا تھا۔ دو افراد نے موٹر وے پہ ایک گاڑی کا شیشہ توڑ کر خاتون اور ان کے بچوں کو باہر نکالا جس کے بعد انہیں قریبی جھاڑیوں میں لے جا کر خاتون کو بچوں کے سامنے مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنایا۔

گوجرانوالہ سے تعلق رکھنے والی خاتون لاہور سے گوجرانوالا جارہی تھی، کار کا پٹرول ختم ہونے کے باعث موٹروے پر گاڑی روک کر شوہر کا انتظار کر رہی تھی، پہلے خاتون نے اپنے ایک رشتے دار کو فون کیا، رشتے دار نے موٹر وے پولیس کو فون کرنے کا کہا۔

موٹروے ہیلپ لائن پر خاتون کو جواب ملا کہ گجر پورہ کی بِیٹ ابھی کسی کو الاٹ نہیں ہوئی اور موٹر وے پولیس بھی نہیں آئی۔ رشتے داروں کے پہنچنے سے پہلے ہی دو افراد نے خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنایا، ملزمان خاتون سے ایک لاکھ روپے نقد، سونے کے زیورات اور اے ٹی ایم کارڈز بھی لے گئے

Leave a reply