fbpx

شمالی کوریا کا بیلسٹک میزائل تجربہ:جنوبی کوریا اور جاپان کاشدید تحفظات کا اظہار

پیانگ یانگ:شمالی کوریا کا بیلسٹک میزائل تجربہ:جنوبی کوریا اور جاپان نے شدید تحفظات کا اظہار ،اطلاعات کے مطابق شمالی کوریا نے پابندی کے باوجود ایک بار پھر اپنے مشرقی ساحل پر بیلسٹک میزائل تجربہ کیا جس پر جنوبی کوریا اور جاپان نے شدید تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

عالمی خبر رساں دارے کے مطابق شمالی کوریا نے اپنے جوہری قوتوں کو تیز رفتاری سے اپ ڈیٹ کرنے کی مہم کے تحت بیلسٹک میزائل تجربہ کیا ہے، یہ میزائل شمالی کوریا کے مشرقی ساحل سے سمندر کی طرف داغا گیا۔

شمالی کوریا کے سخت حریف اور پڑوسی ملک جنوبی کوریا کے جوائنٹ چیفس آف اسٹاف نے الزام عائد کیا کہ شمالی کوریا نے میزائل تجربہ بیلسٹک میزائل تجربہ تھا۔ میزائل نے تقریباً 470 کلومیٹر سفر طے کیا جب کہ فضا میں اس کی بلندی کی حد 780 کلومیٹر تھی۔

جنوبی کوریا کے جوائنٹ چیفس آف جسٹس نے مزید بتایا کہ یہ میزائل تجربہ بھی شمالی کوریا کے دارالحکومت پیانگ یانگ کے علاقے میں بین الاقوامی ہوائی اڈے کے قریب کی گئی۔ یہ وہی علاقہ ہے جہاں شمالی کوریا نے اپنا سب سے بڑا بین البراعظمی بیلسٹک میزائل تجربہ کیا تھا۔

شمالی کوریا کا رواں برس 14 واں میزائل تجربہ ہے اور تازہ ترین میزائل تجربہ اس وقت کیا گیا ہے جب جنوبی کوریا کے نئے صدر یون سک یول 5 دن بعد اپنا عہدہ سنبھالیں گے۔

جنوبی کوریا، جاپان اور امریکا نے شمالی کوریا کے بیلسٹک میزائل تجربے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔