امریکہ کیلئے پی آئی اے کی براہ راست پروازیں، ارشد ملک میدان میں آ گئے، بڑا قدم اٹھا لیا

امریکہ کیلئے پی آئی اے کی براہ راست پروازیں، ارشد ملک میدان میں آ گئے، بڑا قدم اٹھا لیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سی ای او پی آئی اے ایئرمارشل ارشد ملک نے امریکی سفیر اور امریکی وزارت خارجہ کو خط لکھا ہے

خط میں کہا گیا ہے کہ پی آئی اے کو امریکہ کے لیے براہ راست ریلیف پروازوں کی اجازت دی جائے،

سی ای او پی آئی اے ارشد ملک کا خط میں مزید کہنا تھا کہ کورونا وائرس کے سبب امریکا میں پھنسے پاکستانیوں کو چارٹر پروازوں سے لانا چاہتے ہیں۔ کورونا وائرس کے باعث فلائٹ آپریشن معطل ہے، خصوصی پروازیں چلانی ہیں،جس کے لیے امریکی سفارت خانے کی معاونت درکار ہے۔

امریکی سفارت خانہ خصوصی اجازت کے لیے امریکی اداروں سے معاملات طے کرانے میں معاونت کرے۔

حکومت پاکستان کی ہدایات پر بیرون ممالک پھنسے پاکستانیوں کی وطن واپسی کیلئے پی آئی اے کی خصوصی پروازیں جاری ہیں۔

وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی ہدایت پر بیرونِ ممالک میں پھنسے ہو ئے پاکستانیوں کی وطن واپسی کے لئے خصوصی اقدامات کئے گئے ہیں۔ حکومت پاکستان اور خاص طور پر وزیر ِ اعظم عمران خان صورتحال کی ذاتی طور پر نگرانی کر رہے ہیں ،موجودہ تکلیف دہ صورتحال میں مشکلات کا شکار سمندر پار پاکستانیوں کی بھرپور امداد کا فیصلہ کیاگیا ہے۔

پی آئی اے کا عملہ موذی وائرس کے خطرے کے باوجود اس مشکل صورتحال میں صف اول کا کردار ادا کر رہا ہے۔ وزیر ہوابازی غلام سرور خان کی کوششوں سے وطن واپسی کے خواہشمند پاکستانیوں کے لئے خصوصی پروازیں چلانی ممکن ہو ئیں۔ پی آئی اے نے بیرونِ ممالک پھنسے ہو ئے پاکستانیوں کی واپسی کے لیے پاکستان نے4اپریل سے اپنی فلائٹس کا آغاز کیا ،محدود پیمانے پر اسلام آباد کو ائیر ٹریفک کے لئے کھولا گیا اور پی آئی اے پر مسافروں کی تعداد کے حوالے سے پابندیاں عائد کر دی گئیں۔

یہ اَمر قابلِ ذکر ہے کہ وطن واپسی کے لئے پرواز کرنے والی پاکستان انٹرنیشنل ائیر لائنز(PIA)کی اکثر فلائٹس یکطرفہ پرواز ہوتی ہیں۔ جہاز کے عملے اور مسافروں کو قرنطینہ کے مقرر شدہ بین الاقوامی قواعد و ضوابط کے مطابق آپریٹ کیا جاتا ہے۔ یوں مسافروں کی تعداد ایک خاص حد سے آگے نہیں جا سکتی۔

 

پی آئی اے کی مالی مشکلات، سی ای او ارشد ملک اور افسران کا بڑا فیصلہ

پالپا کا پروازوں کو آپریٹ کرنے سے انکار،اصل کہانی کیا ؟ جان کر لگے بڑا جھٹکا

کرونا کیخلاف جنگ،پروازیں آپریٹ نہ کرنیوالوں کے خلاف کیا ایکشن لیا جائے؟ بڑا مطالبہ آ گیا

بیرون ملک سے واپس آنیوالے پاکستانیوں کے لئے ایک اور نیا امتحان

اوورسیز خدا کیلئے واپس نہ آئیں، جانوروں جیسا سلوک صرف ذلت، شہری پھٹ پڑے

 

محدود اندازے کے مطابق 35ہزار کے لگ بھگ پاکستانی وطن واپسی کے خواہشمند ہیں۔ وطن واپسی پر مسافروں کو 48گھنٹے تک قرنطینہ کیا جائیگا،تمام مسافروں کو ٹیسٹنگ کے مرحلے سے گزرنا ہو گا۔ جن کے ٹیسٹ مثبت آئیں گے اُنھیں ہسپتال میں رکھا جائے گا ،وطن واپسی کے لئے بیرون ملک مقیم پاکستانی سفارت خانے سے فی الفور رابطہ کریں

بیرونی ممالک میں پاکستان کے سفیر اور ہائی کمیشنر، پھنسے ہوئے مسافروں کی ترجیحی فہرست ترتیب دینے کے ذمہ دار ہیں۔ اس ضمن میں متعلقہ اداروں اور بیرونِ ملک پاکستانی سفارتخانوں کو مربوط، جامع اور قابلِ عمل ہدایات جاری کر دی گئیں ہیں۔ موزی وائرس سے جنگ میں مصروف ڈاکٹرز، طبی عملہ، قانون نافذ کرنے والے اداروں اور سول انتظامیہ سمیت تمام متعلقہ حکام کی شب و روز کاوشوں کے نتیجے میں ٹیسٹنگ اور قرنطینہ کے انتظامات میں اضافہ کیا گیا جس کے باعث مزید پاکستانیوں کی وطن واپسی ممکن ہو سکی ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.