خفیہ ایجنسیوں نے وزیراعظم کوکوئٹہ جانے سے کیوں روکا؟سرحد پارسے کس نے دہشت گردوں کوکال کی اورکیا احکامات دیئے

0
28

اسلام آباد : خفیہ ایجنسیوں نے وزیراعظم کوکوئٹہ جانے سے کیوں روکا؟سرحد پارسے کس نے دہشت گردوں کوکال کی اورکیا احکامات دیئے،اطلاعات کے مطابق پاکستان کی خفیہ ایجنسیوں نے وزیراعظم کوکوئٹہ جانے سے روک رکھا ہے، ادھر ذرائع کے مطابق اس حوالے سے بڑے خطرناک حقائق سامنے آئے ہیں

دوسری طرف سانحہ مچھ کے شہدا کے لواحقین کا دھرنا چھٹے روز بھی جاری ہے۔ مظاہرین نے لاشوں کی تدفین کو وزیراعظم عمران خان کی آمد سے مشروط کیا تھا لیکن وزیراعظم عمران خان نے ہزارہ برادری کو واضح پیغام دیتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کو اس طرح بلیک میل نہیں کیا جا سکتا، ہزارہ برادری آج ہی تدفین کرے میں گارنٹی دیتا ہوں آج ہی کوئٹہ جاؤں گا۔

آخر وہ کون سی وجوہات ہیں جن کی بنا پر وزیراعظم عمران خان کوئٹہ نہیں جا رہے۔اسی متعلق بات کرتے ہوئے سینئر صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کو سیکیورٹی کلئیرنس نہیں ملی۔انہوں نے انکشاف کیا کہ پاکستان کی ایجنسیوں نے بھارت کی ایک کال ٹریس کی ہے کہ اگر عمران خان کوئٹہ آئے تو ان پر حملہ ہو سکتا ہے۔

سنیئر تجزیہ نگار عارف حمید بھٹی کہتے ہیں کہ میری اطلاعات کے مطابق اس کال کو ٹریس کیے جانے کے بعد ہزارہ برادری کے مظاہرین کی سیکیورٹی بھی سخت کر دی گئی ہے کہ خدانخواستہ ان پر دوبارہ حملہ نہ ہو جائے۔

عارف حمید بھٹی نے مزید کہا کہ وزیراعظم کو مظاہرین کے لیے بلیک میل کا لفظ استعمال کرنا زیب نہیں دیتا،میرے خیال سے وزیراعظم کو یہ الفاظ واپس لینے چاہئیے۔ان کو کہنا چاہئیے تھا کہ شہدا کو دفنا دینا چاہئیے، میں جلد کوئٹہ آؤں گا۔وزیراعظم کے الفاظ کا چناؤ ٹھیک نہیں تھا۔

اس سے پہلے عارف حمید بھٹی نے کہا تھا کہ بڑی تکلیف دن بات ہے، شاید وہ بھول گئے ہیں کہ وہ ایک ملک کے وزیراعظم ہیں۔

Leave a reply