الخدمت فاؤنڈیشن نے 2023میں 21ارب 49کروڑ فلاحی کاموں پر خرچ کئے،ڈاکٹرحفیظ الرحمن

0
84
alkhidmat

الخدمت فاؤنڈیشن پاکستا ن نے سال 2023میں 21ارب 49کروڑ فلاحی کاموں پر خرچ کئے،یتیم بچوں،طلبہ وطالبات ،مریضوں،ایمرجنسی ڈیزاسٹر و دیگرشعبوں میں 2کروڑ 5لاکھ افراد کی خدمت کی گئی،39ڈیزاسٹر مینجمنٹ سنٹرز کے ذریعے الخدمت کے 67ہزاررضاکاروں نے 6لاکھ 25ہزارمتاثرین کوریلیف پہنچایاگیا،22آغوش سنٹرزاورگھروں میں 29ہزارسے زائدیتیم بچوں کی کفالت کررہی ہے،الخدمت فاؤنڈیشن 5269 مستحق طلبہ وطالبات کو436ملین کی سکالرشپ فراہم کرچکی ہے۔

صدرالخدمت فاؤنڈیشن پاکستان ڈاکٹرحفیظ الرحمن نے الخدمت رازی ہاسپٹل اسلام آباد کی ڈونرکانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ 7ارب 50کروڑ صرف شعبہ صحت پرسالانہ خرچ کررہے ہیں،2023 میں دوران سال 52 ہسپتالوں ،50میڈیکل سنٹرز، 113ڈائیگناسٹک سنٹرز، 310ایمبولنس،54فارمیسی،1144میڈیکل کیمپ کے ذریعے 1کروڑ2لاکھ 21 ہزار 527افراد کوہیلتھ کی سہولیات فراہم کی گئیں۔ میڈیکل ڈائریکٹرڈاکٹرطاہرفاروق نے اس موقع پر ہاسپٹل کی کارکردگی اور مستقبل کے اہداف پر شرکاء کوبریف کیا۔اسداللہ بھٹو،حزب اللہ جکھڑو،عبد الحفیظ بجارانی،حامد اطہرملک سمیت بڑی تعداد میں عمائدین اورڈونرز سالانہ ڈونرکانفرنس میں شریک تھے۔

ڈاکٹرحفیظ الرحمن نے کہاکہ 2022کے سیلاب کے دوران متاثرہونے والی 70ہزارخواتین کو الخدمت سیف مدرسیف چائلڈپروگرام کے ذریعے رجسٹرڈ کیا اوران کی زچگی سے متعلق تمام امورمیں انھیں میڈیکل اورغذائی سہولیات فراہم کی گئیں جس پر الخدمت نے ایک ارب روپے خرچ کئے۔ اہل خیرکیلئے یہ مواقع ہیں کہ وہ جنت میں اپنا گھربنانے کیلئے الخدمت فاؤنڈیشن کے پراجیکٹس میں اپنامال خرچ کریں،اللہ کی راہ میں خرچ کیا جائے والا مال کئی گنابڑھ کرواپس ملے گا۔ سالانہ رپورٹ کے مطابق ڈیزاسٹرمینجمنٹ کے شعبہ نے دوران سال 30ہزار840 متاثرہ خاندانوں کو فوڈ پیکج 8,310کو خیمے اور ٹینٹ فراہم کئے، قیدیوں، معذوروں،اقلیتی کمیونٹی سمیت دیگرطبقات کے 39لاکھ 36ہزار افراد کوامدادفراہم کی گئی۔ الخدمت فاؤنڈیشن مستحق افراد کو کاروبارکیلئے 14 ہزار افراد کو 43کروڑ کے بلاسود قرض فراہم کرچکی ہے۔

تمباکو پر ہیلتھ لیوی ٹیکس – ایک جائزہ ،تحریر: راجہ ارشد

ہیلتھ لیوی ،تحریر:ڈاکٹرغلام مصطفی بڈانی

ویسے تو ہیلتھ لیوی کی منظوری 2019جون میں ہوچکی ہے

تمباکو جیسی مصنوعات صحت کی خرابی اور پیداواری نقصان کا سبب بنتی ہیں

” ہیلتھ لیوی کے نفاذ میں تاخیر کیوں” تحریر: افشین

 اگر کھلے مقام پر کوئی سگریٹ پی رہا ہو تو اسکو "گھوریں”

تمباکو سے پاک پاکستان…اک امید

تمباکو سے پاک پاکستان، آئیے،سگریٹ نوشی ترک کریں

Leave a reply