بیٹی کا ڈاکٹر پر تشدد کی ویڈیو وائرل،بھارتی وزیر اعلیٰ نے عوام سے معافی مانگ لی

0
94

بھارتی ریاست میزورام کے وزیراعلیٰ نے اپنی بیٹی کے ڈاکٹر کو تشدد کا نشانہ بنانے پر لوگوں سے معافی مانگ لی۔

باغی ٹی وی : غیر ملکی میڈیا کے مطابق وزیراعلیٰ زورامتھانگا کی صاحبزادی میلاری چھنگتے ریاست کے دارالحکومت ایزاول میں ایک کلینک پر گئی جہاں اس نے چیک کرنے سے انکار پر ڈرماٹالوجسٹ کو تشدد کا نشانہ بنایا ڈالا۔

ٹوئٹر نے سابق سیکیورٹی چیف کے الزامات رد کر دیئے

رپورٹ کے مطابق میلاری بغیر اپائنٹمنٹ لیے ڈاکٹر کے پاس چلی گئی تھی،چنانچہ ڈاکٹر نے اسے چیک کرنے سے انکار کر دیا، جس پر میلاری نے اسے زدوکوب کیا۔


رپورٹس کے مطابق ڈاکٹر نے چیف منسٹر کی بیٹی کو چیک اپ کے لیے آنے سے پہلے اپوائنٹمنٹ لینے کو کہا تھا کلینک پر موجود لوگوں میں سے کسی نے اس واقعے کی ویڈیو بنا کر انٹرنیٹ پر پوسٹ کر دی-

ویڈیو وائرل ہونے پر لوگوں کی طرف سے شدید ردعمل آیا، جس پر میلاری کے والد اور میزورام کے وزیراعلیٰ نے عوام سے معافی مانگ لی ہے ۔

میزورام نے ہفتے کے روز اپنے انسٹاگرام پر ایک عوامی معافی نامہ پوسٹ کیا جس میں خود اور ان کی اہلیہ کے دستخط کیے گئے تھے جس میں کہا گیا تھا کہ ان کے پورے خاندان کے پاس ڈاکٹر کے ساتھ اپنی بیٹی کے رویے کے دفاع میں "کہنے کو کچھ نہیں” ہے اور ڈاکٹر سے معافی مانگی ہے۔ عوام کے ساتھ ساتھ. اس نے کہا کہ وہ کسی بھی طرح اس کے طرز عمل کا جواز پیش نہیں کرے گا۔

ہنگری : محکمہ موسمیات کا سربراہ غلط پیش گوئی پرملازمت سے برطرف

Leave a reply