fbpx

الیکشن کمیشن کا ایک بار پھر تحریک انصاف کو بڑا جھٹکا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن نے ایک بار پھر حکمران جماعت تحریک انصاف کو بڑا جھٹکا دیا ہے

پی کے 63 نوشہرہ کے ضمنی انتخاب میں بے ضابطگیوں کا معاملہ الیکشن کمیشن نے پی کے 63 کے ضمنی انتخاب میں بے ضابطگیوں پرمحفوظ فیصلہ سنادیا

تحریک انصاف کی پی کے 63نوشہرہ کے 46پولنگ اسٹیشنزپردوبارہ پولنگ کی درخواست مسترد کر دی،تحریک انصاف کے امیدوارکوپی کے 63 سے متعلق الیکشن ٹریبونل سے رجوع کرنے کی ہدایت کر دی گئی، درخواست تحریک انصاف کے امیدوار عمرکاکا خیل نے الیکشن کمیشن میں دائر کی تھی

حکمران جماعت سوچ بھی نہیں سکتی تھی کہ وہ نوشہرہ سے ہارجائیں گے،مریم نواز

واضح رہے کہ تحریک انصاف کے امیدوار عمر کاکا خیل نے الیکشن کمیشن سے رجوع کیا تھا اور دھاندلی کے حوالہ سے درخواست دی تھی،عمر کا کا خیل کا کہنا تھا کہ پی کے 63 نوشہرہ میں آر او اورعملےنے منظم دھاندلی کی ،پورے حلقے میں منظم انداز سے دھاندلی کی گئی،

وکیل عمر کاکا خیل کا کہنا تھا کہ 6 ہزار بیلٹ پیپرز چھپائے گئے ہیں،غیرجاری شدہ بیلٹ پیپرز کہاں گئے؟ جو بیلٹ پیپرزجاری نہیں کیے گئے ان پرمہرلگا کرانہیں بیلٹ بکس میں ڈال دیا گیا، پریذائیڈنگ افسر نے کم بیلٹ پیپرز جاری کیے اور بکسے سے زیادہ ووٹ نکلے، پولنگ ایجنٹس بتاتے ہیں کہ جمعہ کی نماز کے وقت دھاندلی کی گئی، ہم نے الیکشن کمیشن میں درخواست دائر کی ہے،ہم نے شواہد الیکشن کمیشن کو فراہم کردیے ہیں،

واضح رہے کہ نوشہرہ میں ن لیگ ضمنی الیکشن جیت گئی تھی اور تحریک انصاف نے اسے چیلنج کیا تھا، نوشہرہ کی سیٹ پی ٹی آئی کی تھی اور ضمنی الیکشن میں پی ٹی آئی ہار گئی تھی

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.