آڈیو کے بعد عمران خان کی جیل سے تصویر بھی” لیک”

0
309
imran khan

بانی پی ٹی آئی، سابق وزیراعظم عمران خان اڈیالہ جیل میں قید ہیں، انہیں عدالت نے تین مقدمات میں سزا سنائی ہے، تا ہم ابھی کئی مقدمات باقی ہیں جن کی سماعت جاری ہے،

عدالت نے عمران خان کو سائفر کیس ، توشہ خانہ کیس، عدت کیس میں سزا سنائی ہے، عمران خان کو زمان پارک سے گرفتا ر کر کے اٹک جیل منتقل کیا گیا تھا، بعد ازاں عمران خان کو اڈیالہ جیل میں لایا گیا، اب عمران خان اڈیالہ میں اپنی سزا پوری کر رہے ہیں تو وہیں کئی مقدمات میں جوڈیشل ریمانڈ پر بھی ہیں، القادر ٹرسٹ سمیت نو مئی کے مقدمات، توہین الیکشن کمیشن سمیت دیگر مقدمات کی سماعت چل رہی ہے، عمران خان جب سے گرفتار ہوئے تب سے انہیں عدالت پیش نہیں کیا گیا،عدالتیں انہیں طلب کرتی رہیں لیکن حکومت کی جانب سے جیل ٹرائل کئے جاتے رہے اوراب بھی جیل ٹرائل ہی ہو رہے ہیں ،عمران خان کی گرفتاری کے بعد سے کوئی تصویر ، ویڈیو ، آڈیو سامنے نہیں آئی تھی.

تاہم . گزشتہ روز، جب پاکستان میں انتخابی مہم اپنے عروج پر تھی اور مہم کا آخری روز تھا، عمران خان کی عدالت میں سماعت کے دوران بشریٰ بی بی کے سابق شوہر خاور مانیکا کے ساتھ بحث کی ویڈیو وائرل ہوئی، ویڈیو کس نے لیک کی؟ کہاں سے آئی؟ اڈیالہ جیل میں مقدمات کور کرنے کے لئے جانے والے کورٹ رپورٹر کا کہنا ہے کہ یہ آڈیو عدالت کی ہے کیونکہ جس روز کیس کی سماعت ہوئی تھی ہم عدالت میں موجود تھے،اس ویڈیو کے بعد عمران خان کی عدالت سے ایک تصویر سامنے آ گئی، اڈیالہ جیل میں لگنے والی عدالت سے جو تصویر سامنے آئی اس میں عمران خان کھڑے ہیں اور شاہ محمود قریشی انکے کان میں بات کر رہے ہیں

تصویر پی ٹی آئی کے مفرور رہنما مرزا شہزاد اکبر نے سب سے پہلے ٹویٹ کی، اس کے بعد سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی، تصویر بارے دعویٰ کیا گیا کہ یہ اڈیالہ جیل کی ہے، اسکی بھی صحافیوں نے تصدیق کی کہ واقعی تصویر اڈیالہ میں لگنے والی عدالت کی ہے، اب سوال یہ ہے کہ الیکشن سے ایک دن قبل عمران خان کی آڈیو اور تصویر لیک کس نے کی؟ عمران خان کا آرٹیکل شائع ہوا تو کہا جاتا رہا کیسے باہر گیا؟ کیسے شائع ہوا سیکورٹی سخت ہوتی ہے، کسی کو کچھ اندر باہر لے جانے کی اجازت نہیں ہوتی، یہ تو طےہے کہ اڈیالہ جیل میں کوریج کے لئے جانے والے صحافیوں سمیت وکلا کی جامہ تلاشی ہوتی ہے اور انکے موبائل فون پر بھی باہر رکھوا لیے جاتے ہیں،اب آڈیو اور تصویر کا سامنے آنا اس پر بھی انکوائری ہو گی اور ہو سکتا ہے جیل حکام جیل سے کسی کو معطل کر دیں تاہم اس آڈیو اور تصویر نے عمران خان کے امیدواروں کی الیکشن مہم میں جان ڈال دی ہے، سوشل میڈیا پر جس طرف نگاہ دوڑائیں عمران خان کی تصویر منٹوں میں وائرل کر دی گئی.

خواب کی تعبیر پر بڑے بڑے وزیر لگائے جاتے تھے،عون چودھری

بشری نے بچوں سے نہ ملنےدیا، کیا شرط رکھی؟ خان کیسے انگلیوں پر ناچا؟

ہوشیار،بشری بی بی،عمران خان ،شرمناک خبرآ گئی ،مونس مال لے کر فرار

بشریٰ بی بی، بزدار، حریم شاہ گینگ بے نقاب،مبشر لقمان کو کیسے پھنسایا؟ تہلکہ خیز انکشاف

تحریک انصاف میں پھوٹ پڑ گئی، فرح گوگی کی کرپشن کی فیکٹریاں بحال

عمران خان، تمہارے لئے میں اکیلا ہی کافی ہوں، مبشر لقمان

عمران ریاض کو واقعی خطرہ ہے ؟ عارف علوی شہباز شریف پر بم گرانے والے ہیں

عمران خان بشری بی بی کو درجنوں بار ملے بھی اور انکو دیکھا بھی ،عون چودھری کا دعویٰ

اڈیالہ جیل میں مقدمات کی کوریج کے لئے جانیوالے سینئر صحافی ثاقب بشیر کہتے ہیں کہ وکلا صحافیوں کو بالکل بھی اجازت نہیں بلکہ تین تین جگہوں پر شدید ترین قسم کی باریک بینی سے چیکنگ ہوتی ہے ممکن ہی نہیں ، اب آڈیو کہاں سے کیسے ریکارڈ پھر لیک ہوئی ؟ یہ جیل انتظامیہ ہی بتا سکتی ہے جہاں تک صحافیوں کی بات ہے وہ تو اتنے دور ہوتے ہیں بمشکل کچھ سن رہے ہوتے ہیں بحرحال یہ اوریجنل آڈیو ہے میں اس دن سماعت میں موجود تھا

الیکشن سے ایک دن قبل عمران خان کی تصویر نے پی ٹی آئی کارکنان کو چارج کر دیا ہے، وہ پرجوش ہو گئے ہیں، انکو ایک بار پھر حوصلہ ملا ہے تا ہم آٹھ فروری کو الیکشن کے نتائج کیا آئیں گے؟ یہ ووٹر باکس سے ہی پتہ چلے گا.

سماعت سے محروم بچوں کے والدین گھبرائیں مت،آپ کا بچہ یقینا سنے گ

عام انتخابات، پاکستان میں موروثی سیاست کا خاتمہ نہ ہو سکا،

سمیرا ملک نے آزاد حیثیت میں انتخابات میں حصہ لینے کا اعلان کیا

عام انتخابات، آصفہ انتخابی مہم چلانے کے لئے میدان میں آ گئیں

صارفین کا کہنا ہے کہ "تنظیم سازی” کرنے والوں‌کو ٹکٹ سےمحروم کر دیا گیا

مسلم لیگ ن نے عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کے سابق دیور احمد رضا مانیکا کو بھی ٹکٹ جاری کر دیا

Leave a reply