آصف زرداری کی موت کی افواہ پھیلانے میں‌ 25 لوگ ملوث، 11 کہاں مقیم ہیں؟ ایف آئی اے نے پتہ لگا لیا

0
61

آصف زرداری کی موت کی افواہ پھیلانے میں‌ 25 لوگ ملوث، 11 کہاں مقیم ہیں؟ ایف آئی اے نے پتہ لگا لیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی اینڈ ٹیلی کمیونیکیشن کا اجلاس چیئر پرسن کمیٹی سینیٹر روبینہ خالد کی زیر صدارت پارلیمنٹ ہاؤس میں منعقد ہوا۔

قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں سابق صدر پاکستان آصف علی زرداری کے حوالے سے چلنے والی جعلی اور من گھڑت ویڈیوز اور افواہوں کے معاملات کے علاوہ 28جنوری 2020کو قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں پی ٹی سی ایل پنشنرز کے حوالے سے قائمہ کمیٹی کی اختیار کی گئی اسپیشل رپورٹ پر عملدرآمد کے معاملات کا تفصیل سے جائزہ لیا گیا۔

چیئرپرسن کمیٹی سینیٹر روبینہ خالد نے کہا کہ جب تک سزاؤں پر عملدرآمد اور جرمانوں میں اضافہ نہیں کیا جائے گا لوگ سوشل میڈیا کے غلط استعمال سے بعض نہیں آئیں گے۔ صدر پاکستان ملک کا سب سے بڑا عہدہ ہے اور سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف پورے رمضان کے مہینے میں جعلی اورمن گھڑت افواہوں کا سلسلہ چلتا رہا لوگوں نے ویڈیو بنا کر نامناسب الفاظ استعمال کرتے ہوئے ویڈیو چلائیں جو انتہائی افسوناک اور قابل مذمت ہے۔ من گھڑت خبروں سے عوام میں بے چینی پیدا کرنے کی کوشش کی گئی سابق صدر آصف علی زرداری نہ صرف اس ملک میں جانی پہچانی شخصیات ہیں بلکہ بین الااقوامی سطح پر بھی انہیں ایک خاص مقام حاصل ہے اُن کی عزت کو مجروح کیا گیا ہے اس طرح لوگوں کی عزتوں کو اچھالنا انتہائی افسوسناک اور قابل سزا جرم ہے۔

ایف آئی اے کی سائبر کرائم ونگ ایسے اقدامات اٹھائے کہ لوگ اسطرح کی جعلی اور من گھڑت افواہوں سے بعض رہیں اور اس حوالے سے اگر قانون میں ترمیم کی ضرورت ہے تو کمیٹی کو آگاہ کیا جائے، کمیٹی ہر ممکن اقدام اٹھائے گی تا کہ اسطرح کے واقعات مستقبل میں نہ ہو سکیں۔ سینیٹر کلثوم پروین نے کہا کہ ملک کی مقبول ترین سابق وزیراعظم کے خلاف بھی الزامات لگائے گئے ہیں وہ بھی ناقابل برداشت ہیں اسطرح سے الزام بازی نہیں ہونی چاہئے۔

جس پر سیکرٹری انفارمیشن ٹیکنالوجی شعیب احمد صدیقی نے کہا کہ سابق صدر کے بارے میں جو غلط افواہیں پھیلائی گئی ہیں وہ قانونی اور مذہبی لحاظ سے نا قابل برداشت ہیں ہمارا مذہب بھی اس کی اجازت نہیں دیتا۔ایف آئی اے اس حوالے سے اقدامات اٹھا رہا ہے ادارے کی بجٹ اور دیگر معاملات میں معاونت کر کے مذید بہتری لائی جا سکتی ہے۔

ڈائریکٹر ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ وقار احمد چوہان نے کمیٹی کو بتایا کہ جب یہ معاملہ کمیٹی کو ریفر ہوا تو کام شروع کر دیا تھا اس معاملے میں تین طرح کے لوگ ملوث تھے اور اس حوالے سے 25 لوگوں کے اکاؤنٹ ملوث تھے پی ٹی اے کے ذریعے ٹیوٹر کو اکاؤنٹ بند کرنے کی درخواست بھیج دی گئی ہے 25میں سے11 لوگوں کی شناخت کی گئی اور جس بندے نے گندے الفاظ استعمال کئے تھے وہ کراچی کا رہائشی تھا اور اب کینیڈا میں رہائش پذیر ہے۔

چیئرپرسن کمیٹی نے ہدایت کی کہ جب بھی وہ آدمی پاکستان آئے تو اُس فورا گرفتار کیا جائے۔

کمیٹی کو بتایا گیا کہ 11میں سے پانچ لوگ بیرون ممالک رہائش پذیر ہیں۔ وقار احمد چوہان نے کمیٹی کو بتایا کہ جعلی اور من گھڑت افواہوں کے حوالے سے قانون کے مطابق کام کیا جاتا ہے عدالت شامل ہونے کی وجہ سے کیس کے حل میں دیر ضرور ہو تی ہے عدالت میں چالان بھیجتے ہیں اور ایک سال سے زائد عرصہ بھی لگ جاتا ہے۔ جس پر چیئر پرسن کمیٹی نے آئند اجلاس میں ڈی جی سائبر کرائم ونگ کو طلب کرتے ہوئے سائبر کرائمز ونگ میں کام کرنے والے ملازمین کی کولیفیکیشن طلب کر لی۔

پی ٹی سی ایل ملازمین کی پنشن کے حوالے سے چیئرپرسن کمیٹی سینیٹر روبینہ خالدنے سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ معاملے کو حل کرنے کی بجائے حیلے بہانے استعمال کئے جا رہے ہیں پنشن کے معاملے کو حل کرانے کیلئے پانچ برس گزر چکے ہیں مگر ابھی تک معاملہ لٹکا ہو ا ہے ایوان بالاء کی قائمہ کمیٹیوں کی سفارشات پر عملدرآمد نہ کر کے پورے ہاؤس کا استحقاق مجروح کیا جا رہا ہے اس معاملے کو جلد سے جلد حل کیا جائے۔ قائمہ کمیٹی کو بتایا گیا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے 1129 کو اہل قرار دیا ہے اور باقی بی ایس ایس کے ملازمین کو علیحدہ رکھنے کا فیصلہ دیا ہے۔ چیئرپرسن کمیٹی سینیٹر روبینہ خالد کے سوال کے جواب میں بتایا گیا کہ کل 40ہزار ملازمین میں سے 21ہزار بی ایس ایس کے ہیں اور اصل ٹی این ٹی کے 17ہزار ملازمین تھے۔ سیکرٹری آئی ٹی نے کمیٹی کو بتایا کہ پنشن کے معاملے کے حوالے سے سینیٹ کی اس قائمہ کمیٹی نے بہت کام کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وفاقی وزیر اعظم خان سواتی نے بھی سینیٹ اجلاس میں اس معاملے کے حل کی یقین دہانی کرائی تھی۔

چیئرپرسن کمیٹی نے کہا کہ ٹرسٹ کی جو ذمہ داری ہے وہ پوری نہیں کر رہا ہے اگر ملازمین کو فائدہ نہیں دے سکتا تو اسے بند کر دینا چاہئے۔ آئندہ اجلاس میں کمیٹی کو فائنل رپورٹ دی جائے کہ کب تک پنشنرز کا مسئلہ حل کر دیا جائے گا۔

چیئرپرسن کمیٹی خالد نے کرونا وباء کی وجہ سے تدریسی عمل بند ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے بچوں کے مستقبل کا معاملہ ہے کہ کوئی ایساطریقہ کار نکالا جائے کہ ہمارے بچوں کی تدریس کا عمل جاری رہے اور وہ کرونا سے بھی محفوظ رہ سکیں۔

سینیٹر کلثوم پروین نے کہا کہ پرائیویٹ اسکولز گزشتہ کئی ماہ سے بند ہیں مگر بچوں کے والدین سے پوری سکول فیس وصول کی جا رہی ہے۔ آن لائن کلاسز کا انتظام پورے ملک میں نہیں ہو سکتا ملک کے بے شمار علاقوں میں نیٹ ورک موجود نہیں ہیں اور نہ ہی والدین کے پاس اتنے وسائل ہیں کہ وہ اسطرح کی سہولیات اپنے ہر بچے کو فراہم کر سکیں۔ پرائیو یٹ سکولوں کو اپنی فیسیں کم کرنی چاہئے اور حکومت کو چاہئے کہ ملک میں نیٹ ورک پھیلانے کے لئے اقدامات اٹھائے۔

جس پر قائمہ کمیٹی نے آئند اجلاس میں وزارت تعلیم،ایچ ای سی، اور پیرا کے حکام کو طلب کر لیا تا کہ وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ساتھ مل کر ایسے طریقہ کار نکالا اور لائحہ عمل اختیار کیا جائے کہ ملک میں ایک موثر اور محفوظ تدریس کا عمل شروع کرایا جا سکے۔

دنیا بحران کی جانب گامزن.ٹرمپ کی چین کو نتائج بھگتنے کی دھمکی، مبشر لقمان کی زبانی ضرور سنیں

سعودی عرب میں طوفان ابھی تھما نہیں، فوج کے ذریعے تبدیلی آ سکتی ہے،سعودی ولی عہد کو کن سے ہے خطرہ؟ مبشر لقمان نے بتا دیا

سعودی شاہی خاندان کو بڑا جھٹکا،بادشاہ اورولی عہد جزیرہ میں روپوش، مبشر لقمان نے کیے اہم انکشافات

سعودی شاہی خاندان میں بغاوت:گورنرہاوسز،شاہی محل فوج کے حوالے،13شہزادےگرفتار،حرمین شریفین کواسی وجہ سےبندکیا : مبشرلقمان

سعودی ولی عہد کے خلاف بغاوت کے الزام میں شاہی خاندان کے 20 مزید افراد گرفتار

سعودی عرب میں بغاوت ، کون ہوگا اگلا بادشاہ؟ سینئر اینکر پرسن مبشر لقمان نےبتائی اندر کی بات

امریکی جیل میں قید ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی ممکن، کیسے؟ سینئر صحافی و اینکر پرسن مبشر لقمان نے بتا دیا

حدیث اور سائنس کی روشنی میں کرونا وائرس 12مئی کے بعد ختم ہوجائے گا؟ سنیے مبشر لقمان کی زبانی

پیپلز پارٹی بمقابلہ اے آروائی ،مبشر لقمان اصل حقیقت منظر عام پر لے آئے

جماعت اسلامی کیخلاف پروگرام پر انکی طرف سے کیا ردعمل آتا ہے؟ مبشر لقمان نے بتا دیا

آسمان سے اہم پیغام آگیا،سمجھنے والوں کے لیے اشارہ کافی،سنیے مبشر لقمان کی زبانی

بڑی خبر آ گئی، آصف زرداری زندہ ہیں یا نہیں؟ سنئے حقیقت مبشر لقمان کی زبانی

بڑی خوشخبری، پاکستان کی قسمت جاگنے والی ہے، کیسے؟ سنیے مبشر لقمان کی زبانی

قائمہ کمیٹی کے آج کے اجلاس میں سینیٹرز کلثوم پروین اور گیان چند کے علاوہ سیکرٹری آئی ٹی شعیب احمد صدیقی، ڈی جی سائبر کرائم ونگ وقار احمد چوہان، ڈی جی پی ٹی اے ناصر احمد اوردیگر اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔

پارک لین کیس میں آصف زرداری پر فرد جرم عائد کرنے کی تاریخ مقرر

SENATOR MRS. RUBINA KHALID, CHAIRPERSON SENATE STANDING COMMITTEE ON INFORMATION TECHNOLOGY AND TELECOMMUNICATION PRESIDING OVER A MEETING OF THE COMMITTEE AT PARLIAMENT HOUSE ISLAMABAD ON JUNE 11, 2020.

Leave a reply