fbpx

عمران خان نے معاشی بحران کو مذہب کی ڈھال بنا لیا ہے جس پر تشویش ہے،شہباز شریف

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ملک میں بڑے پیمانے پر گورننس اور معاشی بحران کے لیے مذہب کو جس طرح ڈھال بنایا ہے، اس پر تشویش ہے۔

باغی ٹی وی : شہباز شریف نے سماجی روابط کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا کہ خود غرضی پر مبنی سیاست سے جس قدر نقصان پہنچا ہے اس کا ادراک بھی مشکل ہے۔

آزاد کشمیر:میرپورمیں کورونا کیسز رپورٹ ہونے پر 7 تعلیمی ادارے بند

شہباز شریف نے وزیر اعظم کی جانب سے لکھے گئے ایک مضمون کے چند گھنٹے بعد تنقید کی جس میں عمران خان نے ’ریاست مدینہ کی روح: پاکستان کی تبدیلی‘ کے عنوان سے مبنی مضمون میں اسلام کے 5 بنیادی ستون اور ملک کے بارے میں بات کی۔


مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما احسن اقبال نےکہا کہ عمران نیازی صاحب آپ کی کابینہ میں تمام بدمعاش اور کرپٹ سیاست دان، کارٹل اور مافیاز بیٹھے ہیں۔ شوگر مافیا، آٹا مافیا، فارما مافیا، فرنس آئل مافیا، ڈالر مافیا، سمگلر مافیا، ذخیرہ اندوزی مافیا آپ کی سرکار نیازی صاحب کی سرپرستی میں ہے۔ تم کس کو بیوقوف بنا رہے ہو؟


علاوہ ازیں مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران خان دین اسلام اور اس کی مقدس اصلاحات کا ناجائز فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہےہیں، وہ مذہبی ‘ایکسپلوئیٹر’ ہیں ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کا مدینہ کی ریاست پہ مضمون لکھنا اس چورکی مانند ہےجوچوری پکڑے جانے پہ مسجد میں چھپ جائے وزیر اعظم نے گزشتہ 3 برس کے دوران ہر قدم پر اسلام اور ریاست مدینہ کی نفی کی ہے-

ملکی معیشت اسٹیٹ بینک کے حوالے کردی گئی،شاہد خاقان

انہوں نے کہا کہ فارن فنڈنگ کے شکنجے میں آنے پر حقائق چھپاتا اور دنیا کو قانون کی بالادستی کادرس دیتا ہےاخلاقی پستی کی علامت شخص کس منہ سے مدینہ کی ریاست کی اخلاقیات کا درس دے رہا ہے؟ریاست مدینہ کا جھوٹا دعویدار ، بیس کلو میٹر پر لوگ زندگیوں سے محروم، ہزاروں ابتلا میں اور یہ محل میں سوتا رہا،مہنگائی سے عوام کا گلا کاٹ کر انصاف اور اصولوں کا مضمون لکھنا بے شرمی اور منافقت ہے طاقتور، مکار سیاستداں اپنی ناکامیوں کو چھپانے کے لئے مضمون لکھ کر قوم کو گمراہ کرنے کی ناکام کوشش کر رہا ہےمری میں بے گناہ جاں بحق ہوجائیں، مہنگائی سے عوام مر جائیں اور لیکچر ریاست مدینہ کے ؟


مریم اورنگزیب نے مزید کہا کہ جس کے قول و فعل میں صرف اور صرف تضاد ہو وہ مدینہ کی ریاست پہ درس دے رہا ہے مدینہ کی ریاست کی قانون کی بالادستی کی بات کرنے والا چار سال سے اپنے ہر کیس سے مفرور ہے بہتان ، الزام بغض ، نفرت عدم برداشت اور جھوٹ کا مجسمہ کس بے شرمی اور ڈھٹائی سے مدینہ کی ریاست پہ مضمون لکھ رہا ہے ریاست مدینہ اور عمران صاحب۔۔استغفراللہ، نعوذبااللہ، انا للّٰہ تین سال میں عمران صاحب نے ہر قدم پر ریاست مدینہ کے اصولوں اور روح کی نفی کی ریاست ِ مدینہ پہ عمران خان کا مضمون لکھنا اِس بات کا ثبوت ہے کہ ا±ن کے گھبرانے اور گھر جانے کا وقت شروع ہوگیا ہے-

اسلام آباد: دہشتگردوں کی فائرنگ سے ایک پولیس اہلکار جاں بحق

مریم اورنگزیب نے مزید کہا کہ تین سال میں عمران صاحب نے ملک کے ساتھ جو کیا اور کہا اس کے بعد سراپا ڈھٹائی، بے شرمی، حقیقت سے انکاری شخص ہی ایسا مضمون لکھ سکتا ہے اپنی لوٹ مار ، نالائقی اور نااہلی میں ڈوبا شخص اپنی ڈوبتی کشتی بچانے کے لئے ریاستِ مدینہ پہ درس نہ دے عمران صاحب اپنی لوٹ مار، نااہلی ، نالائقی چھپانے کے لئے اسلام اورریاست مدینہ جیسے مقدس ناموں کا استحصال کررہے ہیں عمران صاحب جیسا شخص ہی یہ مضمون لکھ سکتا ہے جو حالت انکار، ہٹ دھرمی، ڈھٹائی اور بے شرمی کی غیر معمولی انتہا پر فائز ہے


وزیر اعظم کے تحریر کردہ مضمون پر تحریک انصاف کے منحرف بانی رکن اکبر ایس بابر نے کہا کہ آرٹیکل میں وزیر اعظم عمران نے دعوی کیا تھا کہ “ریاست مدینہ کی روح” قانون کی حکمرانی کو یقینی بنانے پر منحصر ہے’سچ‘ یہ ہے کہ وہ ’روح’ مر گئی اور 10 اکتوبر 2019 کو دفن ہوگئی جب الیکشن کمیشن آف پاکستان نے ایک تحریری حکم نامے میں غیر ملکی فنڈنگ ​​کیس میں پی ٹی آئی کے تاخیری حربوں کو ‘قانون کا تاریخی غلط استعمال’ قرار دیا۔

لوگوں کو بنیادی حقوق سے محروم کرنا کہاں کی جمہوریت ہے؟ سراج الحق