کوئی بھوکا نہ سوئے مہم ،بھارتی مسلمانوں کا شاندار کام، مسجد سے تقسیم ہوتا ہے کھانا

کوئی بھوکا نہ سوئے مہم ،بھارتی مسلمانوں کا شاندار کام، مسجد سے تقسیم ہوتا ہے کھانا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق بھارت میں مسلمانوں نے عمدہ مثال قائم کر دی، کوئی بھوکا نہ سوئے ،مسجد سے مہم چلا کر رزانہ آٹھ سو افراد کو کھانا دیا جا رہا ہے

ممبئی کے علاقہ ساکی ناکہ میں خیرانی روڈ پر جامع مسجد اہل حدیث کی جانب سے مہم شروع کی گئی ہے کہ رات کو کوئی بھوکا نہ سوئے، اس مہم کے تحت روزانہ کم از اکم آٹھ سو افراد کو پکا پکایا کھانا پہنچایا جا رہا ہے، جمعیت اہل حدیث کے امام مولانا عاطف سنابلی کا کہنا ہے کہ بھارت میں لاک ڈاؤن کی وجہ سے غریب اور مزدور طبقہ بہت زیادہ پریشان ہے اور ان کے کھانے پینے کا انتظام کرنا ہم سب کا فرض عین ہے۔

مولانا عاطف کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے بھوک بڑاچیلنج ہے، اگر ہم کام نہیں کریں گے تو کرونا کی بجائے بھوک سے زیادہ اموات ہو جائیں گے، ہم بلا تفریق تمام افراد میں کھانا تقسیم کر رہے ہیں،باقی مساجد کو بھی یہ سلسلہ شروع کرنا چاہئے، ہم دو وقت کے کھانے کے پیکٹ بناتے ہیں اور گھروں میں پہنچاتے ہیں ، بچوں کے لئے دودھ بھی دیتے ہیں جبکہ انتہائی غریب افراد میں راشن بھی تقسیم کر رہے ہیں،

مولانا عاطف کا مزید کہنا تھا کہ کھانے میں بریانی، دال کھچڑی دی جاتی ہے، ہماری خواہش ہے کہ لوگوں کو بہترین کھانا کھلائیں،مخیر حضرات اس سلسلہ میں تعاون کر رہے ہیں، کھانے کی تقسیم کے وقت کرونا سے بچاؤ کے لئے سماجی فاصلے کا خیال رکھا جاتا ہے

بھارتی گلوکارہ میں کرونا ،96 اراکین پارلیمنٹ خوفزدہ،کئی سیاستدانوں گھروں میں محصور

لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی پر کتنے عرصے کیلئے جانا پڑے گا جیل؟

کرونا وائرس، پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس بلانے کا مطالبہ، رکن اسمبلی کا بیٹا بھی ووہان میں پھنسا ہوا ہے، قومی اسمبلی میں انکشاف

کرونا وائرس سے کس ملک کے فوج کے جنرل کی ہوئی موت

کرونا لاک ڈاؤن، گھر میں فاقے، ماں نے 5 بچوں کو تالاب میں پھینک دیا،سب کی ہوئی موت

کرونا میں مرد کو ہمبستری سے روکنا گناہ یا ثواب

جامع مسجد اہل حدیث کے سکریٹری محمد الیاس چودھری کا کہنا ہے کہ ہم نے یہ کام ایک مشن کے طور پر شروع کیا ہے کہ کم از کم اپنے علاقے میں کوئی بھی ضرورتمند، غریب، محتاج اور بیوہ وغیر کوئی بھی بھوکا نہ رہنے پائے۔ ہم نے 23 مارچ کو کام کا آغاز کیا اور اسوقت سے روزانہ عوام کو کھانا دے رہے ہیں،روزانہ 8 سو افراد کو کھانا دیا جاتا ہے جبکہ دو سو خاندانوں میں راشن پیک تقسیم کئے جا رہے ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.