فیض آباد دھرنا،وزیراعظم کا نوٹس،اہم شخصیت کو طلب کر لیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے فیض آباد دھرنے کا نوٹس لے لیا ہے

ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نے وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نور الحق قادری کو فوری طلب کرلیا ہے،وزیر اعظم پیر نور الحق کو فیض دھرنا والوں سے مذاکرات کی ہدایت کریں گے

پیر نور الحق قادری لاہور سے اسلام آباد پہنچ گئے، پیر نور الحق قادری وزیر اعظم کی ہدایت پر فیض آباد دھرنا والوں سے مذکرات کریں گے اور دھرنا ختم کرنے کی اپیل کی جائے گی

تحریک لبیک پاکستان کا فیض آباد کے مقام پر دھرنا جاری ہے، تحریک لبیک کے سربراہ خادم حسین رضوی دھرنا میں پہنچ گئے ہیں، انکے مطالبات میں فرانس سے سفارتی تعلقات ختم کیے جائیں اور فرانس کے سفیر کو فی الفور ملک بدر کیا جائے شامل ہیں، تحریک لبیک حکام کے مطابق مطالبات کی منظوری تک دھرنا جاری رہے گا

دھرنے میں ہزاروں افراد شریک ہیں اور فیض آباد و قرب و جوار کے ہوٹلز بند ہیں، دھرنے کے شرکاء فرانس کے خلاف مسلسل نعرے بازی کر رہے ہیں جبکہ مقررین کے خطابات بھی ہوتے رہتے ہیں

 

واضح رہے کہ تحریک لبیک کا اسلام آباد میں مارچ ہو رہا ہے مارچ میں ہزاروں افراد شریک ہیں جو لیاقت باغ سے گزشتہ شب فیض آباد پہنچے ہیں ،پولیس نے شرکا کو روکنے کی کوشش کی لیکن کامیابی نہ ملی۔ پولیس کی جانب سے آنسو گیس کی شیلنگ کی گئی جبکہ متعدد مقامات پر رکاوٹیں تھیں جن کو عبور کر کے شرکاء فیض آباد پہنچ گئے

فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت پر فرانسیسی سفیر کی بے دخلی اور فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کا مطالبہ لے کر تحریک لبیک کے سربراہ وفاقی دارالحکومت پہنچے ہیں ۔علامہ خادم رضوی مارچ کی قیادت کر رہے ہیں اور مارچ کے شرکاء کے ہمراہ مارچ میں ہی موجود ہیں

فیض آباد، تحریک لبیک کا احتجاج جاری، پولیس کا رات گئے آپریشن ناکام

تحریک لبیک احتجاج، اسلام آباد میں کون کونسے راستے بند ہیں؟ ڈی سی نے بتا دیا

تحریک لبیک کا دھرنا، کارکنان گرفتار،کیا خادم حسین رضوی کو گرفتار کر لیا گیا؟

تحریک لبیک دھرنا،راستے بند ہونے پر ٹریفک کا متبادل روٹ جاری

شاہد خاقان عباسی نے تحریک لبیک کے دھرنے کو "میلہ” قرار دے دیا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.