fbpx

فارن فنڈنگ کیس، پی ٹی آئی کی چوری پکڑی گئی، تہلکہ خیز انکشاف

فارن فنڈنگ کیس، پی ٹی آئی کی چوری پکڑی گئی، تہلکہ خیز انکشاف

اسکروٹنی رپورٹ میں پی ٹی آئی کی اہم دستاویزات، بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات چھپانے کا انکشاف سامنے آیا ہے

فارن فنڈنگ کیس میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے، 4 جنوری کو فریقین سے شیئر کی گئی حکمراں جماعت پاکستان تحریک انصاف کی غیر ملکی فنڈنگ کے بارے میں الیکشن کمیشن کی اسکروٹنی کمیٹی کی رپورٹ میں اسٹیٹ بینک پاکستان کے ذریعے مانگی گئی دستاویزات اور بینک اسٹیٹمنٹس کی 8 جلدیں شامل نہیں ہیں

ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق کمیٹی کی جانب سے چھپائی گئی دستاویزات میں تمام اصل 28 بینک اسٹیٹمنٹس اور 13-2009 کے درمیان پی ٹی آئی کے اکاؤنٹس میں منتقل کی گئی غیر ملکی رقوم کی سال وار تفصیلات شامل ہیں۔کمیٹی کی اپنی خواہشات کے مطابق شواہد کے اس اہم حصے کو خفیہ رکھا گیا ہے جس کا اظہار رپورٹ کے صفحہ 83 پر کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ’کمیٹی کی اس بات پر غور کیا گیا ہے کہ رپورٹ کے وہ حصے جو (پی ٹی آئی) کی بنیاد پر تیار کیے گئے ہیں، اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ذریعے حاصل کیے گئے بینک اسٹیٹمنٹس کو خفیہ رکھا جاسکتا ہے اور عوامی ڈومین میں جاری نہیں کی جا سکتی ہے۔

رپورٹ کے جائزے سے معلوم ہوتا ہے کہ اس کے انکلوژرز سیکشن میں کہا گیا ہے کہکمیشن کی جانب سے اسٹیٹ بینک آف پاکستان-بینک اسٹیٹمنٹس (کتاب 1 سے 8) کے ذریعے طلب کی گئی دستاویزات کو خفیہ رکھا گیا ہے اور وہ رپورٹ کا حصہ نہیں ہیں۔کمیٹی کا پی ٹی آئی کی مالیاتی دستاویزات اور بینک اسٹیٹمنٹس کو خفیہ رکھنے کا فیصلہ بظاہر الیکشن کمیشن آف پاکستان کے اپنے 30 مئی 2018 کے حکم کی خلاف ورزی ہے جس میں کہا گیا تھا کہ ریکارڈ کی جانچ پڑتال ایک عوامی دستاویز ہے، جس کی کاپیاں حاصل کی جاسکتی ہیں۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے 14 اپریل 2021 کو بھی ایسا ہی حکم دیا تھا جس میں کہا گیا تھا کہ جب معاملہ (فارن فنڈنگ کیس) کمیشن کے سامنے آئے گا اس وقت تمام فریقین کاپیاں لے سکتے ہیں یا دستاویزات کا استعمال کر سکتے ہیں

کمیٹی کی رپورٹ میں باور کرایا گیا کہ معلومات کے فرق کو ختم کرنے کے لیے کمیٹی نے ای سی پی کی منظوری سے اسٹیٹ بینک سے درخواست کی کہ وہ 2009 سے 2013 تک ملک میں پی ٹی آئی کی جانب سے چلائے جانے والے بینک اکاؤنٹس سے متعلق تفصیلات فراہم کرے۔

خیال رہے کہ کمیٹی کا مقصد اسٹیٹ بینک آف پاکستان سے موصول ہونے والی معلومات اور تفصیلات کا تجزیہ کرنا اور پی ٹی آئی کے اکاؤنٹس کی مصدقہ، مستند اور قابل تصدیق معلومات کی بنیاد پر صورتحال واضح کرنا تھا۔

رپورٹ میں کمیٹی کے حوالے سے کہا گیا کہ اس نے فیصلہ کیا ہے کہ درخواست گزار اور مدعا علیہ کی جانب سے فراہم کردہ دستاویزات سے نکلنے والا ڈیٹا رپورٹ کے غیر درجہ بند حصے میں ظاہر کیا جائے گا جبکہ اسٹیٹ بینک سے حاصل کردہ ڈیٹا اپنی مرضی سے حاصل کرے گا۔مزید یہ کہ ایک درجہ بند حصے میں واضح کیا جائے تاکہ بینک اکاؤنٹس اور بینکنگ کی معلومات کی رازداری کو کنٹرول کرنے والے قوانین، قواعد اور طریقہ کار کی خلاف ورزی نہ ہو۔اس میں یہ بھی کہا گیا کہ کمیٹی نے فیصلہ کیا کہ بینک اسٹیٹمنٹس، جو اس نے اسٹیٹ بینک کے ذریعے بینکوں سے مانگی ہیں، دیکھنے کے لیے فراہم نہیں کی جائیں گی۔

دوسری جانب قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے الیکشن کمیشن سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ فارن فنڈنگ کیس میں پکڑے جانیوالے 8 والیمز کو سامنے لایا جائے،

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ 8 والیمز میں پی ٹی آئی کے خفیہ بینک اکاؤنٹس، فارن فنڈنگ کی تفصیلات ہیں، 8 والیمز کو خفیہ رکھنا قانونی طور پر جرم ہے۔ تمام ریکارڈ، بینک اکاﺅنٹس اور فان فنڈنگ کی تفصیلات سامنے لائی جائیں، الیکشن کمیشن ریکارڈ چھپانے کے کسی دباﺅ، درخواست یا دھمکی کو خاطر میں نہ لائے یہ حقائق عوام کی امانت ہیں، فارن فنڈنگ کیس کو چھپانا عمران خان کے جرم کا منہ بولتا ثبوت ہے

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ سٹیٹ بینک نے پی ٹی آئی کے اکاﺅنٹس اور کھاتوں کا جو ریکارڈ ڈھونڈا، وہ بے نقاب ہوچکا ہے پی ٹی آئی کے برطانیہ، امریکہ، آسٹریلیا، فن لینڈ، ناروے سمیت 6 غیرملکی تسلیم شدہ بینک اکائنٹس اور دیگر چھپائی گئی تفصیلات پبلک کی جائیں، 8 والیمز، 28 بینک اکاﺅنٹس اور متعلقہ دستاویزات کو چھپایا نہیں جاسکتا، چھپانے والا قانون کی نظر میں مجرم ہے، 7 سال سے یہ ریکارڈ چھپانے کی کوشش جاری ہے لیکن اب مزید یہ سچائی چھپ نہیں سکتی عمران خان نے سات سال تک الیکشن کمشن اور قوم سے حقائق چھپائے ہیں، فارن فنڈنگ کیس کی تمام تفصیلات عوام کو بتانا الیکشن کمشن کی آئینی اور قانونی ذمہ داری ہے دوسروں کی تین نسلوں کا حساب کا مطالبہ کرنے والا اپنے ڈاکے کے 8 والیمز کی تفصیلات چھپانا چاہتا ہے

چینی کی قیمتوں میں اضافے پر سینیٹ میں بھی تحقیقات کا مطالبہ

جہانگیر ترین کے حق میں تحریک انصاف کی کونسی شخصیت کھل کر سامنے آ گئی، بڑا مطالبہ کر دیا

چینی بحران رپورٹ، وزیراعظم کیخلاف تحریک عدم اعتماد آ سکتی ہے یا نہیں؟ شیخ رشید نے بتا دیا

چینی بحران رپورٹ ، جہانگیر ترین پھر میدان میں آ گئے ،بڑا دعویٰ کر دیا

شوگر ملزسٹاک کی نقل و حمل اور سپلائی کی مکمل مانیٹرنگ کا حکم

چینی بحران رپورٹ، جہانگیر ترین کے خلاف بڑا ایکشن،سب حیران، ترین نے کی تصدیق

شوگر کمیشن رپورٹ، وزیراعلیٰ پنجاب،اسد عمر اور مشیر تجارت کے جوابات غیر تسلی بخش قرار

چینی بحران کے ذمہ داروں کیخلاف کب ہو گی کاروائی؟ اسد عمر نے اعلان کر دیا

اصل چینی چور کا نام رپورٹ سے غائب کر دیا گیا، مریم اورنگزیب کا دعویٰ

فارن فنڈنگ کیس، سکروٹنی کمیٹی نے پی ٹی آئی کی استدعا مسترد کر دی

الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج ،پی ڈی ایم کو مہنگا پڑ گیا،الیکشن کمیشن کا ایسا فیصلہ کہ مریم نے "سرپکڑ”لیا

فارن فنڈنگ کیس، سکروٹنی کمیٹی پر اعتراض ہے یا نہیں؟ تحریک انصاف نے عدالت میں بتا دیا

حکم دینے والا ہوں مجھے جواب دینے کی ضرورت نہیں،پی ٹی آئی فنڈنگ کیس میں کس نے ایسا کہا؟

پی ٹی آئی کونسے اکاؤنٹس کا ریکارڈ نہیں دے رہی،اکبر ایس بابرنے الیکشن کمیشن میں کیا کہا؟

اکبر ایس بابر کو مریم نوازکیا دیتی ہیں؟ فرخ حبیب نے لگایا بڑا الزام

واضح رہے کہ وزیر اعظم عمران خان نے فارن فنڈنگ کیس کی کھلی سماعت کرنے کا چیلنج دیا تھا جسے مسلم لیگ ن نے وزیر اعظم کے اس چیلنج کو قبول کرلیا تھا وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا کہ فارن فنڈنگ کیس کی کھلی سماعت اور براہ راست ٹی وی پر نشر کرنے پر بھی تیار ہیں، بے شک فارن فنڈنگ کیس ٹی وی پر براہ راست دکھا دیا جائے بلکہ پارٹی سربراہوں کو بٹھا کر کیس سنا جائے۔

الیکشن کمیشن فارن فنڈنگ کیس کی انکوائری کر رہا ہے تو کیا وزیر اعظم مستعفی ہو جائیں؟ سپریم کورٹ

فارن فنڈنگ کیس، اور عمران خان پھنس گئے