fbpx

سعد رضوی کی رہائی کیخلاف اپیل ،سپریم کورٹ نے فیصلہ سنا دیا

سعد رضوی کی رہائی کیخلاف اپیل ،سپریم کورٹ نے فیصلہ سنا دیا

سپریم کورٹ آف پاکستان میں ‏پنجاب حکومت کی جانب سے تحریک لبیک کے سربراہ سعد رضوی کی رہائی سے متعلق لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف ایپل منظورکر لی گئی

سپریم کورٹ نے تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کی رہائی سے متعلق لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد روک دیا ،سپریم کورٹ نے کیس واپس ہائیکورٹ کو دوبارہ سماعت کے لیے بھجوا دیا،سپریم کورٹ نے کیس ہائیکورٹ کے ڈویژن بینچ کو بھیج دیا کیس کی سماعت اب ہائیکورٹ کا ڈویژن بینچ کرے گا ،جسٹس اعجاز الاحسن اور جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی پر مشتمل بنچ نے سماعت کی ۔وکیل پنجاب حکومت نے عدالت میں کہا کہ افسوسناک واقعے میں تین پولیس اہلکاروں سمیت 12 افراد جان کی بازی ہارے ہائیکورٹ کے نظر ثانی بورڈ نے سعد رضوی کی نظر بندی میں توسیع نہیں کی ۔ جسٹس مظاہر نقوی نے استفسار کیا کہ کیا انسداد دہشتگری دفعات کے تحت نظر بندی کا کوئی گزٹ نوٹیفیکیشن بھی جاری کیا گیا تھا۔ وکیل پنجاب حکومت نے کہا کہ جی گزٹ نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا ہے ۔ وکیل چچا سعد رضوی نے کہا کہ حکومت کے پاس نوے دن کے بعد نظر بندی کی توسیع کا اختیار نہیں ہے ۔ جسٹس مظاہر نقوی نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ شاید دونوں فریقین کی طرف سے کیس کو درست طریقے سے ڈیل نہیں کیا گیا ۔جو ماضی میں واقعہ ہوئے آپ اسے تو مانتے ہیں کہ ایسا واقعہ ہوا ۔ وکیل چچا سعد رضوی برہان معظم نے کہا کہ جب ہنگامہ ہوا اس سے پہلے کے سعد رضوی جیل میں ہیں ۔سعد رضوی بغیر کسی وجہ کے چھ ماہ سے جیل میں قید ہیں ،سپریم کورٹ نے کہا کہ کسی کے ساتھ زیادتی نہیں ہو گی کیس لاہور ہائیکورٹ کو بھجوا دیتے ہیں ۔

واضح رہے کہ تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کی رہائی کے فیصلے کے خلاف حکومت نے ایک بار پھر بڑا قدم اٹھا لیا ،‏پنجاب حکومت نے کالعدم تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کی نظربندی ختم کرنے کا لاہور ہائیکورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا ہے، پنجاب حکومت نے درخواست میں سعد رضوی کے چچا کو فریق بنایا ہے۔حکومت پنجاب نے درخواست میں مؤقف پیش کیا ہے کہ لاہور ہائیکورٹ کے سعد رضوی کو رہا کرنے کے حکم میں قانونی تقاضے پورے نہیں کیے گئے ، لاہور ہائیکورٹ کو کیس سے متعلق تفصیلی ریکارڈ بھی فراہم کیا گیا، سعد رضوی کو نظر بند کرنے کا حکومتی فیصلہ قانونی طور پر درست ہے، عدالت سے استدعا ہے کہ سپریم کورٹ سعد رضوی کو رہا کرنے کے لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دے۔

قبل ازیں سعد رضوی کے وکلا کے مطابق سپریم کورٹ کا تیسرا فیصلہ رہائی کا آیا ہے پہلے دو فیصلوں میں سعد رضوی کی رہائی کے ہائی کورٹ کی جانب سے حکم دیا گیا تھا لیکن اس کے باوجود انہیں رہا نہیں کیا گیا تاہم اب سپریم کورٹ کے فیصلے کو بھی نظر انداز کیا جا رہا ہے- وکلاء نے کہا کہ یہ صرف عدالتوں کی تذلیل ہو رہی ہے ہائی کورٹ کی تذلیل ہے سپرہم کورٹ کے آرڈر کی توہین کر رہے ہیں اور سعد رضوی کی رہائی کے تیسرے آرڈر کی توہین کر رہے ہیں اور مچلکے شورٹی بان تک لینے کو تیار نہیں ہیں

نو اکتوبر کو سپریم کورٹ رجسٹری لاہور میں فیڈرل ریویو بورڈ کا اجلاس ہوا فیڈرل ریویو بورڈ نے تحریک لبیک کے سربراہ سعد رضوی کو رہا کرنے کا حکم دیا تھا ،ودوسری طرف اس رہائی میں تاخیرپھرتحریک لبیک کو اپنے پرانے رویے کی طرف مجبورکررہی ہے- وفاقی نظرثانی بورڈ نے حافظ سعد رضوی کی دوسری نظربندی میں توسیع کا ریفرنس مسترد کرتے ہوئے فوری رہا کرنے کا حکم دیدیا۔ فیڈرل ریویو بورڈ نے حکم دیا کہ سعد رضوی اگر کسی دوسرے کیس میں ملوث نہیں تو رہا کیا جائے

واضح رہے کہ لاہور ہائیکورٹ نے حافظ سعد رضوی کو رہا کرنے کا حکم دیا تھا جس کے بعد ٹی ایل پی کے سربراہ سعد رضوی کی حراست میں توسیع کر دی گئی تھی ،اعلامیے کے مطابق سپریم کورٹ کے فیڈرل ریویو بورڈ کا اجلاس ویڈیو لنک کے ذریعے ہوا جس میں بورڈ نے کالعدم ٹی ایل پی کے سربراہ سعد رضوی کو زیرحراست رکھنے میں توسیع کی اور اس حوالے سے بورڈ کی جانب سے ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ پنجاب کو آگاہ کردیا گیا ہے۔جیل حکام کی طرف سے جاری اعلامیے میں بتایا گیا ہےکہ سعد رضوی کو انسداد دہشتگردی ایکٹ کے تحت کوٹ لکھپت جیل میں رکھا گیا ہے۔ 29 ستمبر کو ڈپٹی کمشنر لاہور نے سپریم کورٹ کے فیڈرل ریویو بورڈ کو خط لکھا تھا جس میں سعد رضوی کی حراست کےمعاملے کا جائزہ لینے کے لیے لکھا گیا تھا

@MumtaazAwan

تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی جو علامہ خادم حسین رضوی کے صاحبزادے ہیں کو 12 اپریل کو اسکیم موڑ چوک لاہورسے گرفتار کیا گیا تھا ،پولیس نے حافظ سعد رضوی کو 16 اپریل کا احتجاج روکنے کے لیے حراست میں لیا کیونکہ حکومت کے ساتھ ان کے مذاکرات ناکام ہوگئے تھے اور فرانسیسی سفیر کو ملک بدر کرنے سے متعلق تحریک لبیک نے اپنے موقف سے پیچھے ہٹنے سے انکار کردیا تھا

سعد رضوی کی گرفتاری کے بعد ملک بھر میں ہنگامہ آرائی ہوئی، اور حکومت نے تحریک لبیک پر پابندی لگا دی، پابندی کے خلاف تحریک لبیک نے اپیل دائر کی ہے جس پر حکومت فیصلہ دے گی تاحال حافظ سعد جیل میں بند ہیں اور انکی جماعت پر پابندی عائد ہے

علامہ خادم حسین رضوی نے ناموس رسالت کے عنوان پر مسلمان قوم میں بیداری پیدا کی،مولانا معاویہ اعظم طارق

تحریک لبیک کا دھرنا، کارکنان گرفتار،کیا خادم حسین رضوی کو گرفتار کر لیا گیا؟

کسی کو نہیں چھوڑیں گے، مذہبی جماعت کیخلاف بڑے فیصلے ہو گئے، شیخ رشید

تحریک لبیک دھرنا،راستے بند ہونے پر ٹریفک کا متبادل روٹ جاری

حکومت کیلئے نئی مشکل، تحریک لبیک کا ناموس رسالت مارچ کا اعلان

تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی گرفتار،تحریک لبیک کے رہنما کی باغی ٹی وی سے گفتگو میں تصدیق

تحریک لبیک کے کارکنان سڑکوں‌ پر نکل آئے،لاہور بند،ملک جام کرنیکا اعلان

پولیس نے ایک بار پھر سانحہ ماڈل ٹاؤن کی یاد تازہ کر دی،کارکنان پر فائرنگ،شیلنگ،اموات

لاہور سمیت مختلف علاقوں میں تشدد،بلاول بھی میدان میں‌ آ گئے

کالعدم مذہبی جماعت اور حکومت میں مذاکرات کامیاب،کیا ہوئے فیصلے؟

فرانسیسی سفیر کی ملک بدری کیلئے قرارداد ہو گی اسمبلی میں پیش

فرانسسیسی سفیر کی ملک بدری کی قرارداد ،بڑی سیاسی جماعت کا اجلاس میں شرکت نہ کرنیکا فیصلہ

تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی رہا؟

کس کس کو رہا کیا جا رہا ہے؟ شیخ رشید کا کالعدم مذہبی جماعت بارے بڑا اعلان

کالعدم جماعت سے پابندی کیسے ختم ہو سکتی ہے؟ شیخ رشید نے بتا دیا

کالعدم تحریک لبیک نے پابندی کیخلاف ایسا کام کر دیا کہ حکومت کو بھی اجلاس بلانا پڑ گیا

کالعدم تحریک لبیک کی درخواست، وزارت داخلہ میں اجلاس

کالعدم جماعت کی بھی لیگل ٹیم ہو سکتی ہے؟ سعد رضوی سے ملاقات نہ کروانے کی درخواست پرعدالت کے ریمارکس

سعد رضوی کی رہائی کی درخواست، عدالت نے فیصلہ سنا دیا

سعد رضوی کی نظر بندی کیخلاف درخواست پر سماعت،عدالت نے کیا دیا حکم؟

سعد رضوی کی نظر بندی کیخلاف درخواست پر سماعت،دلائل مکمل

باغی ٹی وی سروے،تحریک لبیک پہلے نمبر پر،حافظ سعد رضوی کے حق میں سب سے زیادہ ووٹ

سعد رضوی کی رہائی میں نیا موڑ، اصل کہانی کیا، مبشر لقمان نے حقیقت بتا دی

تحریک لبیک کے سربراہ سعد رضوی کو فوری رہا کرنے کا حکم

حافظ سعد رضوی کو رہا کیوں نہیں؟ سی سی پی او لاہور فوری طلب

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!